تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
یہ امریکا ہے، جہاں فلسطینی نژاد رشیدہ پہلی مسلمان کانگریس وویمن منتخب ہونے جا رہی ہیں
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

ہفتہ 21 محرم 1441هـ - 21 ستمبر 2019م
آخری اشاعت: بدھ 26 ذیعقدہ 1439هـ - 8 اگست 2018م KSA 17:55 - GMT 14:55
یہ امریکا ہے، جہاں فلسطینی نژاد رشیدہ پہلی مسلمان کانگریس وویمن منتخب ہونے جا رہی ہیں
لندن ۔ کمال قبیسی

مشی گن ریاست کی سابقہ قانون ساز رشیدہ طلیب امریکی کانگریس کی پہلی مسلمان خاتون رکن منتخب ہونے جا رہی ہے۔ رشیدہ کو ڈیموکریٹ پارٹی نے کانگریس کی نشت کے لئے نامزد کیا ہے۔ ڈسٹرکٹ 13 میں ہونے والے پرائمری مقابلے میں ریپبلیکن سمیت کسی اور جماعت کے امیدوار نے ان کے مقابلے میں کاغذات نامزدگی داخل نہیں کرائے جس کے بعد امسال نومبر میں ہونے والے کانگریس کے انتخاب میں رشیدہ طلیب کی کامیابی یقینی ہو گئی ہے۔

رشیدہ کی کامیابی سے گذشتہ دسمبر میں مستعفی ہونے والے کانگریس مین جان کانئیر کے 53 سالہ اقتدار کا خاتمہ ہو جائے گا۔ کانیئر 1965سے اس علاقے سے کانگریس کے رکن چلے آ رہے تھے۔ انہوں نے جنسی ہراسیت اور خرابی صحت کے الزامات کی وجہ سے چند ماہ قبل استعفی دیا۔

کانگریس کی رکنیت کے حوالے سے کانیئر کی ٹرم ختم ہونے میں دو ماہ کا قلیل عرصہ باقی رہ گیا ہے۔طلیب اور ڈیٹریاٹ سٹی کونسل کی صدر برنڈا جونز میں کانٹے کا مقابلہ ہے۔ اس مرحلے کا کامیاب امیدوار نومبر کو بلامقابلہ کانگریس کا رکن منتخب ہو جائے گا۔

رشیدہ طلیب ماضی میں امریکی صدارتی امیدوار ڈونلڈ کی جانب سے مسلمان تارکین وطن کے امریکا آنے پر پابندی کے مطالبات پر سخت نالاں تھیں۔ انھوں نے کہا کہ امریکی مسلمان اکثر دہشت گردی کی مذمت کرتے ہیں، تاہم کچھ امریکی ان کی اس مذمت کا یقین نہیں کرتے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند