تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
ایران امریکی مفادات کو دھمکاتا ہے تو بھرپور فوجی جواب دیا جائے: سینیٹر لنڈسے گراہم
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

پیر 18 ربیع الثانی 1441هـ - 16 دسمبر 2019م
آخری اشاعت: پیر 15 رمضان 1440هـ - 20 مئی 2019م KSA 22:43 - GMT 19:43
ایران امریکی مفادات کو دھمکاتا ہے تو بھرپور فوجی جواب دیا جائے: سینیٹر لنڈسے گراہم
سینیٹر لنڈسے گراہم سینیٹ کی عدالتی کمیٹی کی ایک سماعت کے دوران میں گفتگو کررہے ہیں۔فائل تصویر
العربیہ ڈاٹ نیٹ

امریکا کی حکمراں جماعت ری پبلکن کے سینیٹر لنڈسے گراہم نے کہا ہے کہ اگر ایران امریکی مفادات کو خطرے سے دوچار کرتا ہے تو اس کو بھرپور فوجی جواب دیا جائے ۔انھوں نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ پر زور دیا ہے کہ وہ ’’پختہ عزم‘‘ کے ساتھ کھڑے ہوں۔

سینیٹر گراہم نے قومی سلامتی کے مشیر جان بولٹن کی بریفنگ کے بعد سوموار کو ایک ٹویٹ میں کہا ہےکہ’’یہ بالکل واضح ہے، گذشتہ چند ہفتے کے دوران میں ایران نے دوسری اقوام کی تیل پائپ لائنوں اور بحری جہازوں پر حملے کیے ہیں اور عراق میں امریکی مفادات کے لیے خطرات پیدا کیے ہیں‘‘۔

انھوں نے لکھا ہے :’’ ایرانی غلطی پر ہیں ، امریکا یا کوئی دوسری قوم نہیں۔اگر ایرا ن امریکی اہلکاروں اور مفادات کے خلاف اپنی دھمکیوں کو عملی جامہ پہناتا ہے تو ہمیں بھرپور فوجی جواب دینا چاہیے‘‘۔

امریکی سینیٹر نے یہ بیان گذشتہ ہفتے سعودی عرب میں آرامکو کی تیل کی تنصیبات پر ڈرون حملوں ، متحدہ عرب امارات کے پانیوں کے نزدیک چار بحری جہازوں پر تخریبی حملےاور اتوار کو عراق کے دارالحکومت بغداد کے انتہائی سکیورٹی والے علاقے’ گرین زون‘ پر راکٹ حملے کے بعد جاری کیا ہے۔یہ راکٹ امریکی سفارت خانے کے نزدیک پھٹا تھا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گذشتہ روز ایران کو خبردار کیا تھا کہ ’’ اگر وہ لڑائی چاہتا ہے تو یہ باضابطہ طور پر اس کے خاتمے پر منتج ہوگی ۔وہ امریکا کو پھر کبھی ڈرائے دھمکائے نہیں‘‘۔اس کے جواب میں ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے ایک ٹویٹ میں کہا ہے کہ’’ امریکی صدر کے نسل کشی کی دھمکی پر مبنی بیان سے ایران ختم نہیں ہوگا‘‘۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند