تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
گولن تحریک سے تعلق کے شبے میں 128 ترک فوجیوں کی گرفتاری کاحکم
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعرات 16 ربیع الاول 1441هـ - 14 نومبر 2019م
آخری اشاعت: بدھ 15 شوال 1440هـ - 19 جون 2019م KSA 07:14 - GMT 04:14
گولن تحریک سے تعلق کے شبے میں 128 ترک فوجیوں کی گرفتاری کاحکم
العربیہ ڈاٹ‌ نیٹ

ترک حکام نے امریکا میں خود ساختہ جلا وطن لیڈر فتح اللہ گولن کی جماعت سے تعلق کے شبے میں 128 فوجیوں کی گرفتاری کاحکم دیا ہے۔ ترک حکام کا کہنا ہے کہ ان فوجیوں پر سنہ 2016ء کی ناکام فوجی بغاوت میں ملوث ہونے کا شبہ ظاہرکیا جا رہا ہے۔

خبر رساں ایجنسی'رائیٹرز' نے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ ترک پولیس گولن تحریک سےتعلق کے شبے میں 128 فوجیوں‌کی گرفتاری کے لے چھاپے مار رہی ہے۔ان میں سے نصف فوجی مغربی ساحلی علاقے ازمیر اور باقی ملک کے دیگر 30 علاقوں سے تعلق رکھتے ہیں۔

ذرائع کاکہنا ہےکہ پولیس کومطلوب فوجیوں‌میں امریکا میں مذہبی رہ نما فتح اللہ گولن کی تحریک کے ساتھ وابستگی کا شبہ ہے۔ ترک حکومت کا دعویٰ ہے کہ سنہ 2016ءٰ کی ناکام فوجی بغاوت کی منصوبہ بندی فتح اللہ گولن نے کی تھی تاہم وہ بار بار اس الزام کی سختی سے تردید کرچکے ہیں۔

ترکی میں فوجی بغاوت کی ناکام کوشش کے بعد اس میں‌ملوث ہونے کے شبے میں 77000 افراد کو گرفتار کرکے ان کے خلاف مقدمات چلائے جا رہے ہیں جب کہ ڈیڑھ لاکھ سرکاری ملازمین جن میں فوج اورپولیس کے اہلکار بھی شامل ہیں کو ملازمت سےفارغ کردیا گیا ہے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند