تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
افغانستان :طالبان کے حملے میں حکومت نواز ملیشیا کے 26 ارکان ہلاک
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

پیر 21 صفر 1441هـ - 21 اکتوبر 2019م
آخری اشاعت: ہفتہ 25 شوال 1440هـ - 29 جون 2019م KSA 17:50 - GMT 14:50
افغانستان :طالبان کے حملے میں حکومت نواز ملیشیا کے 26 ارکان ہلاک
کابل ۔ ایجنسیاں

افغانستان کے صوبے بغلان میں ہفتے کے روز طالبان کے حملے میں حکومت نواز ملیشیا کے چھبیس ارکان ہلاک ہوگئے ہیں۔

افغانستان کے مختلف صوبوں میں مقامی ملیشیاؤں کے ارکان بھی سرکاری سکیورٹی فورسز کے ساتھ چیک پوسٹوں یا سرکاری عمارتوں پر تعینات ہیں اور وہ اکثر طالبان یا دوسرے جنگجوؤں کے حملوں کا نشانہ بنتے رہتے ہیں۔ طالبان نے ایک بیان میں اس حملے کی ذمے داری قبول کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

بغلان میں تشدد کا یہ واقعہ ایسے وقت میں پیش آیا ہے جب امریکا اور طالبان کے نمایندے قطر کے دارالحکومت دوحہ میں امن مذاکرات کا نیا دور شروع کرنے والے ہیں۔

امریکا کے خصوصی ایلچی برائے افغانستان زلمے خلیل زاد اور طالبان کے نمایندوں کے درمیان دوحہ میں مذاکرات کا یہ ساتواں دور ہوگا اور اس میں چار امور انسداد دہشت گردی ، جنگ زدہ ملک میں غیر ملکی فوجیوں کی موجودگی، بین الافغان مکالمہ اور مستقل جنگ بندی پر بات چیت کی جائے گی۔

امریکی حکام ماضی میں اس توقع کا اظہار کرچکے ہیں کہ افغانستان میں آیندہ صدارتی انتخابات کے انعقاد سے قبل کوئی امن ڈیل طے پا جائے گی۔یہ صدارتی انتخابات اس سے پہلے دو مرتبہ موخر ہوچکے ہیں اور اب ستمبر میں منعقد ہوں گے۔

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے گذشتہ منگل کو کابل کا غیر علانیہ دورہ کیا تھا اور طالبان کے ساتھ یکم ستمبر تک امن سمجھوتا طے پانے کی امید کا اظہار کیا تھا۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند