تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
روسی صدر ولادی میر پوتین کا 'العربیہ' کو پہلا انٹرویو
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعہ 17 ربیع الاول 1441هـ - 15 نومبر 2019م
آخری اشاعت: اتوار 13 صفر 1441هـ - 13 اکتوبر 2019م KSA 12:37 - GMT 09:37
روسی صدر ولادی میر پوتین کا 'العربیہ' کو پہلا انٹرویو
العربیہ ڈاٹ نیٹ

روس کے صدر ولادی میر پوتین نے 'العربیہ' چینل کو پہلا انٹرویو دیا ہے۔ ان کا یہ خصوصی انٹرویو اتوار کے روز دن 12 بجے ٹی وی اسکرین پر نشر کیا جائے گا۔

روسی صدر کا یہ انٹرویو اس اعتبار سے اہمیت کا حامل ہے کہ آئندہ ہفتے صدر پوتین سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کا دورہ کر رہے ہیں۔ ان کے دورے سے قبل ان کا انٹرویو اہمیت کا حامل ہے۔

روسی نیوز ایجنسیوں کے مطابق روسی صدر کے معاون یوری عشاکوف نے اعلان کیا کہ صدر پوتین 14 اکتوبر بروز پیر کو سعودی عرب جائیں گے۔ سعودی عرب کے ایک روزہ دورے کیے بعد وہ 15 اکتوبر کو متحدہ عرب امارات کا دورہ کریں گے۔

روسی صدر نے آخری بار 12 سال قبل فروری 2007ء میں سعودی عرب کا دورہ کیا تھا جب کہ سعودی فرمانروا شاہ سلمان نے 2017ء میں روس کا دورہ کیا تھا۔ روسی صدر نے اس دورے کو تاریخی قرار دیا تھا۔

روسی عہدیدار نے مزید کہا کہ پوتین کے دورہ سعودی عرب کے دوران معاشی اور تجارتی معاہدوں سمیت تقریبا 30 یاداشتوں پر دستخط کیے جائیں گے۔ اس کے علاوہ روسی سرمایہ کاری فنڈ سعودی عرب میں قریبا دو ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان کرے گا۔

عشاکوف نے بتایا کہ صدر ولادی میر پوتین سعودی قیادت سے ملاقات میں دوطرفہ تعاون سمیت مختلف شعبوں میں تعاون پر تبادلہ خیال کریں گے۔ ملاقات میں توانائی ، زراعت ، صنعت ، عسکری امور - تکنیکی تعاون ، ثقافتی اور دیگر منصوبوں پرتبادلہ خیال کیا جائے گا۔

صدر پوتین اور سعودی عرب کی قیادت کے درمیان ہونے والی بات چیت میں مشرق وسطی اور شمالی افریقہ بالخصوص شام ، خلیج، یمن کی صورتحال اور فلسطین کے مسئلے کے حل پر بھی خصوص طور پر بات چیت کی جائے گی۔ صدر پوتین خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان سے الگ الگ ملاقاتیں کریں گے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند