تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
سعودی عرب: کرپٹ عہدیداروں کو 32 سال قید اور 9 ملین ریال جرمانہ
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعرات 14 ربیع الثانی 1441هـ - 12 دسمبر 2019م
آخری اشاعت: ہفتہ 18 ربیع الاول 1441هـ - 16 نومبر 2019م KSA 08:16 - GMT 05:16
سعودی عرب: کرپٹ عہدیداروں کو 32 سال قید اور 9 ملین ریال جرمانہ
دبئی ۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ

سعودی عرب کی ایک عدالت نے مالی اور انتظامی بدعنوانی میں ملوث پانچ عہدیداروں کو قومی وسائل برباد کرنے، اختیارات کے ناجائز استعمال، قومی املاک میں غیر قانونی تصرف، سرکاری ملازمتوں کی خرید و فروخت اور دیگر غیر قانونی اقدامات پر 32 سال قید اور 90 لاکھ ریال کے برابر جرمانہ کی سزا سنائی ہے۔

خبر رساں ایجنسی 'ایس پی اے' کے مطابق پراسیکیوٹری جنرل نے کرپشن میں ملوث ملزمان کے خلاف 300 شواہد جمع کیے جس کے بعد ان کے خلاف فرد جرم عاید کی گئی ہے۔ ملزمان کو 32 سال قید اور بھاری جرمانہ کی سزا سنائی گئی ہے۔

پراسیکیوٹر جنرل کا کہنا ہے کہ بدعنوانی کے الزامات کے تحت سزا پانے والوں پر رشوت وصول کرنے، جعل سازی، دھوکہ دہی، اپنے سرکاری عہدوں اور مناصب کا ناجائز استعمال کرنے، ملازمتوں کے لیے لین دین کرنے کے الزامات عاید کیے گئے ہیں۔ اس کیس کے مرکزی ملزم کو 12 سال قید اور ایک ملین ریال سے زاید کی رقم بہ طور جرمانہ جمع کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند