تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2020

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
کرونا وائرس : سعودی عرب میں دو ستونوں پر مبنی نئی حکمت عملی کا 28 مئی سے آغاز
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعرات 11 ذیعقدہ 1441هـ - 2 جولائی 2020م
آخری اشاعت: منگل 3 شوال 1441هـ - 26 مئی 2020م KSA 23:34 - GMT 20:34
کرونا وائرس : سعودی عرب میں دو ستونوں پر مبنی نئی حکمت عملی کا 28 مئی سے آغاز
سعودی عرب کے وزیر صحت توفیق الربیعہ
العربیہ ڈاٹ نیٹ

سعودی عرب نے کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے 28 مئی سے اپنی حکمت عملی کے نئے مرحلے کے آغاز کا اعلان کیا ہے۔سعودی عرب کے وزیر صحت توفیق الربیعہ نے سوموار کو بتایا ہے کہ یہ نئی حکمت عملی دو ستونوں پر مبنی ہے۔

انھوں نے کہا ہے کہ اس نئے مرحلے کے لیے حکومت نے ایک واضح ویژن وضع کیا ہے۔ یہ دو اشاریوں پر مبنی ہوگا۔ اوّل، صحت کے نظام کی تشویش ناک کیسوں کے علاج کی صلاحیت۔ دوم، ٹیسٹ اور ابتدائی مرحلے میں تشخیص کی پالیسی ۔

توفیق الربیعہ نے کہا کہ '' پہلے سے اختیار کردہ پیشگی حفاظتی اقدامات کی بدولت ہمیں کرونا وائرس کے پھیلنے کی شرح پر قابو پانے اور اس کے لیے تیاری کا موقع ملا ہے۔ گذشتہ عرصہ کے دوران میں ہم نے کمیونٹی میں شعور اجاگر کیا ،صحت عامہ کے نظام کا تحفظ کیا، لیبارٹریوں کی صلاحیت دُگنا کردی ، انتہائی نگہداشت کے لیے کمرے بنائے گئے اور وینٹی لیٹرز مہیا کیے گئے۔

انھوں نے کہا کہ سعودی عرب میں کرونا کی وَبا پھوٹنے کے بعد تمام تر تیاریوں کا کریڈٹ حکومت اور عوام کو جاتا ہے کیونکہ عوام نے حکومت کی اعلان کردہ حفاظتی احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد کیا ہے۔اس کی وجہ سے مملکت میں دوسرے ممالک کے مقابلے میں کم اموات ہوئی ہیں۔

مستقبل میں مملکت کی کرونا وائرس سے نمٹنے کے لیے حکمت عملی کے بارے میں گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ ''حکومت کے فیصلے صحت کے نظام کے تفصیلی تجزیے پر مبنی ہوتے ہیں۔اس تجزیے سے پالیسیوں اور لائحہ عمل پر وقت ضرورت نظرثانی کی جاتی ہے۔"

توفیق الربیعہ نے کہا کہ حکومت اپنی حکمت عملی کے اس نئے مرحلے پر جمعرات 28 مئی سے عمل درآمد کا آغاز کرے گی اور معمول کے حالات کی واپسی تک اپنی پالیسیوں پر نظرثانی کرتی رہے گی۔ یہ حکمت عملی سماجی فاصلہ اختیار کرنے پرمبنی ہے۔

تاہم انھوں نے یہ وضاحت نہیں کی ہے کہ حکومت کی یہ نئی حکمت عملی پہلے سے اختیار کردہ اقدامات سے کس طرح مختلف ہوگی۔
 

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند