تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
دوحہ میں تہران کے سفیر کا ايران، عراق اور قطر پر مشتمل اتحاد بنانے کا مطالبہ
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

پیر 18 ربیع الثانی 1441هـ - 16 دسمبر 2019م
آخری اشاعت: منگل 10 شعبان 1440هـ - 16 اپریل 2019م KSA 10:51 - GMT 07:51
دوحہ میں تہران کے سفیر کا ايران، عراق اور قطر پر مشتمل اتحاد بنانے کا مطالبہ
دبئی – العربیہ نیوز چینل

دوحہ میں ایرانی سفیر نے مطالبہ کیا ہے کہ خطے میں امریکی دباؤ کا مقابلہ کرنے کے لیے ایران، قطر اور عراق کے درمیان سہ فریقی اتحاد تشکیل دیا جائے۔

جنوبی ایران میں سرمایہ کاری کے مواقع کے حوالے سے دوحہ میں منعقد ایک کانفرنس کے دوران ایرانی سفیر محمد علی سبحانی نے کہا کہ قطر اور عراق کو چاہیے کہ وہ امریکا کا سامنا کرنے کے لیے ایک اتحاد میں شامل ہوں۔

تاہم ایرانی سفیر کی امیدیں ممکنہ طور پر پوری نہیں ہو سکیں گی۔

عراق پہلے ہی اپنے سرکاری موقف کا اعلان کر چکا ہے کہ وہ کسی بھی علاقائی اتحاد میں شمولیت اختیار نہیں کرے گا اور تمام فریقوں کے ساتھ اچھے تعلقات کے لیے کوشاں ہے۔

یہاں تک کہ عراقی وزیراعظم عادل عبد المہدی جو سعودی عرب کے دورے کی تیاری کر رہے ہیں ،،، وہ ایک سے زیادہ مرتبہ اس بات پر زور دے چکے ہیں کہ علاقائی جھمیلوں سے کنارہ کشی اختیار کرنے کی پالیسی پر کاربند رہیں گے۔

مذکورہ عراقی موقف کی روشنی میں اب قطر ہی اس دو طرفہ اتحاد کا نمایاں ترین شریک رہ جاتا ہے.. دوحہ نے حالیہ چند برسوں میں ایران کے ساتھ مختلف سطحوں پر اپنے تعلقات کو مضبوط بنایا ہے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند