تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
متحدہ عرب امارات نے مستقل سکونتی پروگرام کا آغاز کر دیا
گولڈن کارڈ مستقل سکونتی پروگرام سے ابتدائی طور پر 6800 تارکین وطن فائدہ اٹھائیں گے
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعہ 8 ربیع الثانی 1441هـ - 6 دسمبر 2019م
آخری اشاعت: منگل 16 رمضان 1440هـ - 21 مئی 2019م KSA 19:19 - GMT 16:19
متحدہ عرب امارات نے مستقل سکونتی پروگرام کا آغاز کر دیا
گولڈن کارڈ مستقل سکونتی پروگرام سے ابتدائی طور پر 6800 تارکین وطن فائدہ اٹھائیں گے
شیخ محمد نے ٹویٹ کے ذریعے گولڈن کارڈ مستقل سکونتی پروگرام کا اعلان کیا
العربیہ اردو سٹاف رپورٹ

متحدہ عرب امارات نے اعزازات کی اپنی طویل فہرست میں ایک حالیہ نیا اضافہ کیا ہے۔ یہ اضافہ ملک میں مقیم غیر معمولی صلاحیتوں کے حامل تارکین وطن کے لئے ’’گولڈن کارڈ‘‘ مستقل اقامہ کا اجراء ہے۔

اس سے قبل سعودی عرب نے بھی اپنے مقیم تارکین وطن کے لئے امریکی گرین کارڈ کی طرز پر مستقل اور مخصوص مدت کے لئے کارآمد منفرد اقامہ جاری کرنے کا اعلان کیا تھا۔

یو اے ای کا گولڈن کارڈ اقامہ طب، انجنیئرنگ اور سائنس کے شعبے میں غیر معمولی پیشہ وارانہ ٹریک ریکارڈ کے حامل غیر ملکیوں کو جاری کیا جائے گا۔ نیز ملک میں غیر معمولی سرمایہ کاری کرنے والے تارکین وطن کو بھی مستقل سکونت دی جائے گی۔

متحدہ عرب امارات کے نائب صدر، وزیر اعظم اور حاکم دبئی شیخ محمد بن راشد المکتوم نے منگل کے روز مستقل سکونت پروگرام کا اجراء کیا۔ اس پروگرام سے استفادہ کرنے والے 6800 سرمایہ کاروں کی دبئی میں سرمایہ کاری کا حجم ایک سو ارب اماراتی درہم سے زیادہ ہے۔

ٹویٹر پر گولڈن کارڈ مستقل سکونتی پروگرام کے اجراء کا اعلان کرتے ہوئے شیخ محمد نے کہا کہ ’’آج نے امارات میں مستقل سکونت کا پروگرام شروع کیا ہے۔ گولڈن کارڈ سسٹم سے استفادہ کرنے والوں میں غیر معمولی صلاحیتوں کی حامل شخصیات اور امارات کی ترقی میں مثبت کردار ادا کرنے والے شامل ہوں گے۔ ہم انہیں اپنا مستقل شریک بنانا چاہتے ہیں تاکہ وہ ہاتھوں میں ہاتھ ڈال کر ہمارے ساتھ چل سکیں۔ یو اے ای میں بسنے والے تمام تارکین وطن ہمارے بھائی ہیں اور ہم انہیں امارات کے عظیم فیملی کا حصہ سمجھتے ہیں۔‘‘

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند