تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
خامنہ ای نے آرامکو پر حملوں کی مشروط طور پر منظوری دی : امریکی عہدہ دار
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

پیر 21 صفر 1441هـ - 21 اکتوبر 2019م
آخری اشاعت: جمعرات 19 محرم 1441هـ - 19 ستمبر 2019م KSA 21:41 - GMT 18:41
خامنہ ای نے آرامکو پر حملوں کی مشروط طور پر منظوری دی : امریکی عہدہ دار
ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای
العربیہ ڈاٹ نیٹ

امریکا کے نیوز چینل سی بی ایس نے ایک امریکی ذمے دار کے حوالے سے بتایا ہے کہ ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے ہفتے کے روز سعودی عرب میں آرامکو کمپنی کی تیل کی دو تنصیبات پر ڈرون حملوں کی منظوری دی تھی۔ البتہ اس ذمے دار کا کہنا ہے کہ خامنہ ای نے یہ شرط رکھی تھی کہ کارروائی اس طریقے سے پوری کی جائے کہ تہران حملے میں کسی بھی طور اپنے ملوث ہونے کی تردید کر سکے۔

سعودی وزارت دفاع نے بدھ کے روز اعلان کیا تھا کہ مملکت میں آرامکو کی تنصیبات کو نشانہ بنانے والے حملے شمال کی جانب سے کیے گئے اور ان کو ایران کی سپورٹ حاصل تھی۔

سعودی وزارت نے اُن میزائلوں کے ٹکڑے اور باقیات کو میڈیا کے سامنے پیش کیا جن کے ذریعے البقیق اور ہجرہ خریص کے علاقوں میں آرامکو کے دو پلانٹس کو نشانہ بنایا گیا تھا۔ اس کا یہ بھی کہنا تھا کہ "ہمارے پاس اس بات کے ثبوت ہیں کہ ایران خطے میں اپنے ایجنٹوں کے ذریعے تخریب کاری کی کارروائیوں میں ملوث ہے"۔

سی بی ایس نیوز کی رپورٹ کے مطابق امریکی ذمے داران کا کہنا ہے کہ اس حوالے سے ناقابل تردید ثبوت ابھی تک سامنے نہیں لائے گئے ہیں۔ یہ شواہد سیٹلائٹ تصاویر کی شکل میں ہیں جن میں مغربی ایران میں الاہواز کے فضائی اڈے پر ایرانی پاسداران انقلاب کے عناصر کو اس حملے کی تیاری کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا کہنا ہے کہ امریکا اس موقع پر سعودی عرب کے ساتھ کھڑا ہے۔ سعودی عرب کو اپنے دفاع کا حق حاصل ہے اور امریکا اس حق کی حمایت کرتا ہے۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق امریکی وزیرخارجہ نے ان خیالات کا اظہار جدہ میں سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان بن عبدالعزیز سے ملاقات میں کیا۔

امریکی وزیر خارجہ نے اپنے ملک کی طرف سے سعودی عرب کی البقیق اور ہجرہ خریص میں آرامکو کی تنصیبات پر تخریی حملوں کی  شدید مذمت کی۔ ان کا کہنا تھا کہ آرامکو کی تیل تنصیبات پرحملوں میں ایران کا ہاتھ ہے۔ امریکا ان حملوں کی عالمی سطح پر تحقیقات کی حمایت کرنے کے ساتھ ان میں بھرپور مدد فراہم کرے گا۔ امریکی وزیر خارجہ نے ایران کی ان مجرمانہ کارروائیوں کے مقابلے میں سعودی عرب کی سلامتی اور استحکام کے لیے مکمل حمایت کا اظہار کیا۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند