تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
روسی دفاعی نظام 'ایس 400' کی خریداری سے دست بردار نہیں ہوں گے: ترکی
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعرات 14 ربیع الثانی 1441هـ - 12 دسمبر 2019م
آخری اشاعت: ہفتہ 18 ربیع الاول 1441هـ - 16 نومبر 2019م KSA 08:31 - GMT 05:31
روسی دفاعی نظام 'ایس 400' کی خریداری سے دست بردار نہیں ہوں گے: ترکی
انقرہ ۔ ایجنسیاں

ترکی کے صدر رجب طیب اردوآن نے جمعہ کے روز کہا ہےکہ ترکی امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ بات چیت کے دو دن بعد روس کا ایس -400 میزائل دفاعی نظام خریدنا بند نہیں کرے گا۔

خیال رہے کہ بدھ کے روز ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے امریکا کے دورے کے دوران اپنے امریکی ہم منصب ڈونلڈ ٹرمپ سے ملاقات کی۔ اس ملاقات کا مقصد شام میں ترک فوج کی مداخلت، ایس 400 روسی دفاعی نظام اور دیگر مسائل پر پیدا ہونے والی کشیدگی دور کرنا تھا۔

واشنگٹن کا کہنا ہے کہ روسی نظام اپنے ایف 35 لڑاکا طیاروں کے لیے خطرہ ہے۔ یہی وجہ ہے کہ امریکا نے لڑاکا پروگرام میں ترکی کی شرکت معطل کردی ہے۔

ٹی آر ٹی نیوز کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں اردوآن کے معاون ابراہیم کالن نے کہا کہ امریکا اور ترکی کے عہدیداروں نے جمعہ کے روز ایف -35 پر ایس -400 کے اثرات کا جائزہ لینے کے لیے ایک طریقہ کار پر کام کرنا شروع کیا ہے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند