تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2020

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
حزب اللہ کے مالی سوتوں سے متعلق معلومات پر 10 ملین ڈالر انعام
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

بدھ 9 ربیع الثانی 1442هـ - 25 نومبر 2020م
آخری اشاعت: ہفتہ 7 ربیع الاول 1442هـ - 24 اکتوبر 2020م KSA 23:41 - GMT 20:41
حزب اللہ کے مالی سوتوں سے متعلق معلومات پر 10 ملین ڈالر انعام
ایجنسیاں

امریکا نے ایرانی حمایت یافتہ حزب اللہ کے مالی سوتوں تک رسائی سے متعلق معلومات دینے والے کو 10 ملین ڈالر کا انعام دینے کا اعلان کیا ہے۔

دفتر خارجہ کے مطابق ’’انعام کی پیش کش کے بدلے ہمیں حزب اللہ کی سرگرمیوں، نیٹ ورکس اور تنظیم سے منسلک ان افراد کے بارے میں معلومات درکار ہیں جو اس کے لیے مالی وسائل جمع کرنے کا محور شمار ہوتے ہیں۔ یہ معلومات تنظیم کو سرمایہ فراہم کرنے والے محمد قیصر، محمد قاسم البزال اور علی قیصر جیسے افراد کے بارے میں ہونی چاہیں۔

امریکا محمد قیصر کو ایران اور حزب اللہ کے درمیان اہم رابطہ کار سمجھتا ہے۔ قیصر شام سے لبنان اسلحہ کی منتقلی میں سہولت کاروں کا ایک یونٹ چلاتا ہے۔

امریکی دفتر خارجہ کے بقول مذکورہ شخص ایران کے انقلابی گارڈز کے بیرون ملک آپریشن کی نگرانی کرنے والی القدس فورس کا رابطہ کار ہے۔ بیان میں البزال کو القدس فورس اور انقلابی گارڈز کا مرکزی سرمایہ کار بتایا گیا ہے۔

البزال اور علی قیصر حزب اللہ سے وابستہ بے نامی کمپنیوں کے فرنٹ مین ہیں جو سٹیل انڈسٹری کے لیے کام کرتے ہیں۔ وہ ایرانی خام تیل کی شام ترسیل میں بھی معاونت کرتے ہیں۔ امریکی وزارت خزانہ ماضی میں مذکورہ تینوں اشخاص کو خصوصی عالمی دہشت گرد قرار دے چکی ہیں۔


 

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند