تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2020

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
میجرجنرل بابرافتخارنئے ڈائریکٹر جنرل آئی ایس پی آر ، آصف غفور جی او سی اوکاڑہ تعینات
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

ہفتہ 22 جمادی الاول 1441هـ - 18 جنوری 2020م
آخری اشاعت: جمعرات 20 جمادی الاول 1441هـ - 16 جنوری 2020م KSA 16:25 - GMT 13:25
میجرجنرل بابرافتخارنئے ڈائریکٹر جنرل آئی ایس پی آر ، آصف غفور جی او سی اوکاڑہ تعینات
پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ ( انٹر سروسز پبلک ریلشنز) کے نئے ڈائریکٹرجنرل، میجر جنرل بابر افتخار۔
اسلام آباد ۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ

میجر جنرل بابر افتخار کو پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ ( انٹر سروسز پبلک ریلشنز، آئی ایس پی آر) کا نیا ڈائریکٹر جنرل مقرر کیا گیا ہے اور ان کے پیش رو میجر جنرل آصف غفورکو جنرل آفیسر کمانڈنگ ( جی او سی) اوکاڑہ تعینات کردیا گیا ہے۔

پاک فوج میں ان نئے تقرر اور تعیناتیوں کا اعلان آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ کی جمعرات کو وزیراعظم عمران خان سے اسلام آباد میں ملاقات کے بعد کیا گیا ہے۔انھوں نے وزیراعظم سے پاک فوج کے پیشہ ورانہ امور پر تبادلہ خیال کیا تھا۔

آئی ایس پی آر کے سبکدوش ہونے والے سربراہ میجر جنرل آصف غفور نے ایک ٹویٹ میں اپنے ساتھ کام کرنے والے اپنے ساتھیوں کا شکریہ ادا کیا ہے۔انھوں نے بالخصوص تمام میڈیا کا شکریہ ادا کیا ہے اور لکھا ہے کہ پاکستانیوں نے انھیں جس محبت اور حمایت سے نوازا، وہ اس کا شکریہ ادا نہیں کرسکتے۔ انھیں 2016ء میں لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ کی جگہ اس عہدے پر مقررکیا گیا تھا۔انھوں نے ادارے کے نئے ڈی جی کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا ہے۔

میجرجنرل بابر افتخار نے مارچ1990ء میں پاکستان آرمی میں کمیشن حاصل کیا تھا۔ وہ کمانڈ اینڈ اسٹاف کالج کوئٹہ، نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی اسلام آباد اور رائل کمانڈ اینڈ اسٹاف کالج اردن کے فارغ التحصیل ہیں۔وہ پاک فوج میں کمان ، اسٹاف اور انسٹرکشن کے وسیع تجربے کے حامل ہیں۔

وہ پاک فوج کی ایک آرمرڈ بریگیڈ میں بریگیڈ میجر ،شمالی وزیرستان میں ایک انفینٹری ڈویژن میں بریگیڈئیر اسٹاف اور کور ہیڈ کوارٹر میں چیف آف اسٹاف کے طور پر خدمات انجام دے چکے ہیں۔انھوں نے شمالی وزیرستان میں دہشت گردوں کے خلاف آپریشن ضربِ عضب کے دوران میں ایک آرمرڈ بریگیڈ کی کمان کی تھی۔

میجرجنرل بابرافتخار مطالعے کے شوقین ہیں۔ وہ اعلیٰ عسکری پیشہ ورانہ صلاحیتوں اور تجربے کے ساتھ ساتھ درس وتدریس سے بھی شغف رکھتے ہیں اور پاکستان ملٹری اکیڈمی اور نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی اسلام آباد میں فیکلٹی رکن کی حیثیت سے خدمات انجام دے چکے ہیں۔وہ شادی شدہ ہیں اور ان کے چار بیٹے ہیں۔وہ اپنی نئی ذمے داریاں سنبھالنے سے قبل پاک فوج کی ایک آرمرڈ ڈویژن کے کمان کررہے تھے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند