تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2020

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
سابق بیورو کریٹ سکندر سلطان راجا پاکستان کے نئے چیف الیکشن کمشنر نامزد
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعرات 3 رجب 1441هـ - 27 فروری 2020م
آخری اشاعت: منگل 25 جمادی الاول 1441هـ - 21 جنوری 2020م KSA 17:05 - GMT 14:05
سابق بیورو کریٹ سکندر سلطان راجا پاکستان کے نئے چیف الیکشن کمشنر نامزد
پاکستان کے نامزد چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجا ۔ فائل تصویر
اسلام آباد ۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ

پاکستان کی حکومت اور حزبِ اختلاف نے گذشتہ کئی ماہ کے مذاکرات کے بعد سابق بیوروکریٹ سکندر سلطان راجا کو ملک کا نیا چیف الیکشن کمشنر نامزد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق شیریں مزاری نے منگل کے روز ایک نیوزکانفرنس میں اس فیصلے کا اعلان کیا ہے۔انھوں نے مزید بتایا ہے کہ پارلیمانی کمیٹی میں نثار درانی کو صوبہ سندھ سے اور شاہ محمد جتوئی کو صوبہ بلوچستان سے الیکشن کمیشن پاکستان کا رکن نامزد کرنے پر اتفاق رائے ہوگیا ہے اور اب اس فیصلے کو منظوری کے لیے وزیراعظم عمران خان کو بھیج دیا جائے گا۔

قبل ازیں پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس پارلیمان میں اسپیکر اسد قیصر کے زیر صدارت ان کے چیمبر میں ہوا۔اس میں وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم نے بھی شرکت کی۔اس میں الیکشن کمیشن کے سربراہ اور دو ارکان کے تقرر کے لیے حکومت اور حزب اختلاف کے نامزد کردہ ناموں پر غور کیا گیا۔

حزب اختلاف کی جماعت پاکستان مسلم لیگ نواز کے رکن اسمبلی رانا ثناءاللہ نے کہا کہ ’’ سکندر سلطان راجا ہمارے ساتھ پنجاب میں ایک عرصہ تک کام کرچکے ہیں۔وہ ایک دیانت دار ، محنتی اور نفیس انسان ہیں۔مجھے امید ہے کہ ان کی سربراہی میں الیکشن کمیشن پاکستان اب آیندہ عام انتخابات میں شفافیت کو یقینی بنائے گا۔‘‘

کمیٹی کی رکن ایم این اے شاہدہ اختر علی نے کہا کہ’’الیکشن کمیشن میں تقرر کے لیے تینوں ناموں کی منظوری کسی اختلاف کے بغیر دی گئی ہے۔ان پر اتفاق رائے سیاست دانوں اور پارلیمان دونوں کی جیت ہے۔‘‘

پارلیمانی کمیٹی کے اس فیصلے سے ایک روز قبل ہی قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے لندن سے وزیراعظم کو ایک ترمیمی فہرست بھیجی تھی۔حزب اختلاف کی اس فہرست میں سابق سیکریٹری خارجہ جلیل عباس جیلانی کی جگہ سابق اٹارنی جنرل عرفان قادرکا نام شامل کیا گیا تھا۔

حزب اختلاف نے اس سے پہلے چیف الیکشن کمشنر کے عہدے کے لیے حکومت کو تین نام بھیجے تھے، باقی دو نامزدگان سابق چیف جسٹس پاکستان آصف سعید کھوسہ کے بھائی سابق بیورو کریٹ ناصر محمود کھوسہ اور سابق وفاقی سیکریٹری اخلاق احمد تارڑ تھے۔

دوسری جانب وزیراعظم عمران خان نے میاں شہبازشریف کو حکومت کی جانب سے چیف الیکشن کمشنر کے لیے تین ریٹائرڈ بیوروکریٹوں جمیل احمد ، فضل عباس میکن اور سکندر سلطان راجا کے نام تجویز کیے تھے۔ پارلیمانی کمیٹی کے اجلاس میں ان چھے ناموں پر غور کے بعد آخرالذکرکو چیف الیکشن کمشنر نامزد کرنے پراتفاق رائے ہوا ہے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند