جاپانی ساختہ اڑنے والی موٹرسائیکل کی قیمت جان کرآپ کے ہوش اڑ جائیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

ہوائی جہاز کی ایجاد کے کئی سال گذرنے کے بعد بھی اڑنے کا خواب آج بھی انسانوں پر حاوی ہے۔ جاپان کی ایک کمپنی نے پہلی اڑنے والی موٹرسائیکل کا انکشاف کیا ہے جسے امریکا میں ہونے والے ڈیٹرائٹ آٹو شو میں دکھایا گیا اور جاپانی مینوفیکچررز نے اسے رواں سال میں لانچ کرنے کا ارادہ کیا جب کہ آئندہ سال امریکا میں اس کی مارکیٹنگ کی جائے گی۔

XTURISMO ہوور بائیک کو جاپانی کمپنی AERWINS Technologies نے بنایا ہے اور یہ 40 منٹ تک اڑ سکتی ہے۔اس کی رفتار 62 میل فی گھنٹہ یعنی ایک سو کلو میٹرکی رفتار تک پہنچ سکتی ہے۔

آٹو شو کے شریک چیئر تھاڈ سوزٹ نے ٹیسٹ ڈرائیو یا فلائٹ ٹیسٹ لینے کے بعد کہا کہ "میں لفظی طور پر ایسا محسوس کر رہا ہوں جیسے کوئی 15 سالہ نوجوان سٹار وار گاڑیوں میں سے کسی میں کود رہا ہو۔"

موٹر سائیکل پہلے ہی جاپان میں فروخت پر ہے اور AERWINS کے بانی اور CEO Shuhei Komatsu نے کہا کہ 2023 میں امریکا میں اس کا چھوٹا ورژن فروخت کرنے کے منصوبے پرکام جاری ہے۔

لیکن قیمت سات لاکھ 77 ہزارڈالر ہے جو کہ اپنی زیادہ قیمت کی وجہ سے گاہکوں کے لیے پریشان کن بھی ہے۔ Komatsu نے کہا کہ کمپنی 2025 تک چھوٹے الیکٹرک ماڈل کے لیے لاگت کو 50,000 تک کم کرنے کی امید رکھتی ہے۔

اس ماہ کے شروع میں AERWINS نے کہا تھا کہ وہ Nasdaq اسٹاک ایکسچینج میں 600 ملین مالیت کی ایک نجی حصول کمپنی کے ساتھ انضمام کے ذریعے فہرست بنانا چاہتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں