غلاف کعبہ میں استعمال ہونے والی روئی کی مقدارکتنی ہے اور یہ کیسے استعمال کی جاتی ہے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

کپاس کے عالمی دن کے موقع پرجو ہر سال 7 اکتوبر کومنایا جاتا ہے،شاہ عبدالعزیز کمپلیکس برائے غلاف کعبہ انڈر سیکریٹری جنرل انجینیر امجد بن عایض الحازمی نے وضاحت کی کہ غلاف کعبہ کی تیاری میں روئی ایک اہم اور ضروری عنصر ہے۔

الحازمی کے مطابق غلاف کعبہ کے سنہری ٹکڑوں کی تیاری میں روئی کا استعمال کعبہ کے غلاف میں استعمال ہونے والی آیات مقدسہ کے کڑھائی والے حروف کو نمایاں کرنے کے لیے ان کے درمیان خالی جگہ بھرنے کے استعمال کی جای ہے۔

انہوں نے وضاحت کی کہ اس روئی کو کعبہ کے غلاف کے لیے کنگ عبدالعزیز کمپلیکس کےمختلف حصوں میں بُنا جاتا ہے جس میں جدید ترین ٹیکسٹائل مشینوں کا استعمال کرتے ہوئے غلاف کعبہ کے لیے استر کے طور پر استعمال کیا جاتا ہے۔ روئی کے استعمال سے غلاف کعبہ کی مضبوطی میں اضافہ ہوتا ہے اور یہ کٹاؤ کےعوامل سے محفوظ رہتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ غلاف کعبہ میں استعمال ہونے والی روئی کا وزن 410 کلو گرام ہے اور غلاف کعبہ کا کل وزن 1300 کلو گرام ہے۔

درایں اثنا کپاس کے عالمی دن کے موقع پر، ماحولیاتی اور زرعی محقق ناصر الشدوی نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ کپاس کا پوداان بہترین پودوں میں سے ایک ہے جو تمام موسموں، چاہے سرد ہو یا گرم میں کاشت کیا جا سکتا ہے۔ یہ ایک سدا بہار پودا ہے جو پورا سال سرسبز رہتا ہے۔ اس کی اونچائی تقریباً 4 میٹر تک پہنچ جاتی ہے۔

الشدوی نے وضاحت کی کہ کپاس دنیا بھر میں سب سے زیادہ کاشت کی جانے والی زرعی فصلوں میں سے ایک ہے۔ اسے دنیا میں سب سے زیادہ کاشت اور فروخت کی جانے والی فصلوں میں سے ایک سمجھا جاتا ہے۔ اسے دھونا بھی آسان ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں