عبدالرحمٰن الراشد

عبدالرحمٰن الراشد

عبدالرحمٰن الراشد عالمی شہرت یافتہ صحافی ہیں۔ وہ لندن سے شائع ہونے والے پان عرب روزنامہ الشرق الاوسط کے ایڈیٹر انچیف اور العربیہ نیوز چینل دبئی کے جنرل مینجر رہ چکے ہیں۔ ان دنوں وہ ’’العربیہ‘‘ نیوز چینل کی مجلس ادارت کے سربراہ کے طور پر خدمات سرانجام دے رہے ہیں۔ الشرق الاوسط کے ساتھ کالم نگار کی حیثیت سے ان کی وابستگی برقرار ہے اور وہ اس کے لیے باقاعدگی سے کالم لکھتے ہیں۔

کیا ہم نیا اوباما دیکھ رہے ہیں؟

صدر براک اوباما نے یہ وضاحت نہیں کی کہ مصر میں جب فوجی انقلاب برپا ہوا تو کیا ہوا تھا اور انھوں نے شام میں صدر بشارالاسد کے رجیم کو اقتدار سے نکال باہر کرنے کے لیے مہم جاری رکھی ہوئی ہے۔وہ مشرق وسطیٰ......

شام اور جنیوا کانفرنس

جنیوا کی جانب جانے والی شاہراہ معمول سے ہٹ کر کم خطرناک ہوگئی ہے لیکن ابھی بہت سے جنگیں لڑنا باقی ہیں۔ آنے والے دنوں میں وقوع پذیر ہونے والے واقعات شامی بحران کے حل کی راہ نکالیں گے۔ ان میں سب سے پہلے......

۔۔۔۔۔۔ اور اب حزب اللہ کی لبنانی صدر کو دھمکیاں

ٹھگی کی مزید کوئی سرخ لکیر یا کم سے کم سطح نہیں ہے کہ جس کو قبول کیا جاسکے۔اس کا آغاز 2005ء میں رفیق حریری کے قتل سے ہوا تھا اور اب لبنانی جمہوریہ کے صدر اس کے آخری شکار نہیں ہوں گے۔ لبنان اور عرب......

متحارب ریلیاں مصر کو کہاں لے جائیں گی؟

میں اس کالم کو تحریر کرنے سے قبل اس بات کا انتظار نہیں کرسکتا تھا کہ قاہرہ میں کس نے زیادہ اجتماع اکٹھا کیا ہے۔ خواہ اخوان المسلمون ہو یا اس کے مخالفین، میں اس بات میں یقین رکھتا ہوں کہ ہم سڑکوں پر......

کیا بشارالاسد واقعی جنگ جیت گئے؟

گذشتہ تین ماہ کے دوران میں نے جو سب سے زیادہ بات سنی، وہ یہ کہ شامی انقلاب کا رنگ پھیکا پڑ چکا ہے اور یہ کہ شامی عوام کی صدر بشارالاسد کے جبرواستبداد والے رجیم کے خاتمے کی خواہشات دم توڑ گئی ہیں۔ کیا......

ترکی گفتند اور کارگزاری کے درمیان

میں یہ بات نہیں جانتا کہ ترک حکام شام کے اقدامات کے نتیجے میں عرب دنیا کو پہنچنے والے نقصانات کا کہاں تک ادراک رکھتے ہیں مگر مجھے یقین ہے کہ وہ اپنے مفادات کے نفع ونقصانات کا تخمینہ لگانے میں دوسروں......