.

اعلیٰ تعلیم یافتہ یولیا ایلیپووا 2014ء کی مِس روس منتخب

نومنتخب دوشیزہ برطانیہ میں مِس ورلڈ مقابلے میں روس کی نمائندگی کریں گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

تئیس سالہ اعلیٰ تعلیم یافتہ یولیا ایلیپووا پچاس حسیناؤں کو شکست دینے کے بعد 2014ء کے لیے مِس روس منتخب ہوگئی ہیں۔

روس کی سال کی نئی حسینہ کے انتخاب کے لیے مقابلہ ہفتے کے روز ماسکو میں منعقد ہوا۔جب حسینائیں اپنے اپنے حسن کا جادو جگا رہی تھیں تو عین اس وقت اقتدار کے ایوانوں میں پڑوسی ملک یوکرین میں بحران کے خاتمے کے لیے فوجی چڑھائی پر غور کیا جارہا تھا۔

یولیا ایلیپووا بالاکوفو سے تعلق رکھتی ہیں۔انھیں ماسکو کے نزدیک واقع بارویکھا لگژری ویلج کنسرٹ ہال میں منعقدہ مقابلے میں مِس روس منتخب کیا گیا اور تاج پہنایا گیا۔اس کے ساتھ انھیں ایک لاکھ ڈالرزنقد رقم اور ہنڈائی سولارس کار انعام میں دی گئی ہے۔اب وہ اس سال برطانیہ میں منعقد ہونے والے مس ورلڈ اور برازیل میں ہونے والے مس یونیورس کے مقابلے میں اپنے ملک کی نمائندگی کریں گے۔

مِس روس کے انتخاب کے لیے حتمی مقابلے میں پچاس حسیناؤں نے حصہ لیا تھا۔اس میں ماسکو سے تعلق رکھنے والی اناستیشیا ریشیتووا دوسرے اور روستووسکیا سے تعلق رکھنے والی اناستیا کوستنکو تیسرے نمبر پر رہی ہیں۔

بھورے بالوں اور سبز رنگ کی آنکھوں والی نئی حسینۂ روس پڑھائی میں بھی ذہین وفطین اور سب سے آگے ہیں۔انھوں نے ریاضی اور فزکس میں گریجوایشن کی تھی اور روسی زبان کے گریجوایشن کے امتحان میں زیادہ سے زیادہ ممکنہ نمبرز حاصل کیے تھے۔انھوں نے ماسکو کی پاور انجینیرنگ یونیورسٹی سے اعلیٰ تعلیم حاصل کی ہے اور اب ایک پاور انجینیر ہیں اور روسی، انگریزی زبان کی سرٹیفیائیڈ مترجمہ ہیں۔

واضح رہے کہ روس میں سب سے حسین دوشیزہ کے انتخاب کے لیے مقابلہ 1992ء سے منعقد کیا جارہا ہے اور روسی دوشیزاؤں نے اب تک تین بڑے عالمی مقابلے جیتے ہیں۔1992ء میں روسی دوشیزہ مس ورلڈ منتخب ہوئی تھی،2002ء میں مس یونیورس اور 2008ء میں پھر مس ورلڈ منتخب ہوئی تھی لیکن 2002ء میں منتخب ہونے والی مس یونیورس سے بعد میں اعزاز واپس لے لیا گیا تھا۔