.

سعودی خاتون نے کروڑوں ریال کی جائیداد وقف کر دی

پچاس کروڑ مالیت کا عطیہ عدالت میں رجسٹرڈ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی ایک 80 سالہ خاتون نے 50 کروڑ ریال مالیت کا اپنا کل ترکہ ملک میں فلاحی کاموں اور ضرورت مندوں کی بہبود کے لیے وقف کر دیا ہے۔ عمر رسیدہ خاتون نے ریاض کی ایک عدالت میں خود جا کر خطیر رقم عدالت میں درج کرائی۔

سعودی تاجر رہ نما بدر الراجحی نے العربیہ ڈاٹ نیٹ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب میں بزرگ شہریوں کی جانب سے اپنے ضرورت مند بھائیوں کی بہبود کا گہرا جذبہ موجود ہے۔ بزرگ شہری ضرورت مندوں کو اپنے بہن بھائیوں اور اولاد کا درجہ دیتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ایک بزرگ خاتون نے خود عدالت میں جا کر اپنی کل وراثت راہ خدا میں وقف کردی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق چند ہفتے قبل سعودی عرب کی ایک سترہ سالہ لڑکی نے 50 ملین ریال حکومت کے ذریعے عطیہ کر دیے تھے۔ یہ رقم اسے اپنے والد کی جانب سے ورثے میں ملی تھی جس کا چوتھائی اس نے فی سبیل اللہ خرچ کر دیا تھا۔