.

سعودی عرب میں اسرائیل سے درآمد پھل کی فروخت کا انکشاف!

اطلاع پر حکام کے مختلف دکانوں پر دھڑا دھڑ چھاپے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے شمالی ضلع القریات میں اسرائیل سے درآمد شدہ ٹماٹر نما فروٹ المعروف جاپانی پھل کی بھاری مقدار قبضے میں لیے جانے کے بعد حکام نے مزید دکانوں پر بھی چھاپے مارنا شروع کیے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی ضلعی محکمہ صحت وماحولیات کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ حکام کو اطلاع ملی تھی کہ قریات کے بازاروں میں اسرائیل سے لائے گئے فروٹ فروخت کیے جا رہے ہیں۔ پولیس نے چھاپہ مارکر 140 کلو گرام "جاپانی پھل" قبضے میں لیا ہے۔

ماحولیاتی صحت کے شعبے کے چیئرمین عبدالعزیز المساعد نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ ایک دُکان سے ڈیڑھ سو کلو گرام کے لگ بھگ اسرائیل سے منگوایا گیا جاپانی فروٹ قبضے میں لیے جانے کے بعد دیگر دکانوں پر بھی چھاپے مارے گئے ہیں تاہم مزید کسی دکان سے اسرائیلی پھلوں اور دیگر مصنوعات کی موجودگی کا کوئی سراغ نہیں ملا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ محکمہ خوراک اور وزارت تجارت سمیت متعلقہ دیگر شعبوں کو بھی مارکیٹوں میں اسرائیلی پھلوں کی موجودگی کے بارے میں مطلع کرکے انہیں خبردار کر دیا گیا ہے۔ محکمہ خوراک اور وزارت تجارت کی جانب سے واضح کیا گیا ہے کہ سعودی عرب میں اسرائیلی مصنوعات، پھلوں، سبزیوں اور دیگر اجناس کی خریدو فروخت کی اجازت نہیں ہے۔

عبدالعزیز المساعد کا کہنا تھا کہ انہیں یہ معلوم نہیں ہو سکا ہے کہ اسرائیلی فروٹ سعودی عرب میں کیسے پہنچائے گئے ہیں تاہم حکام اس کی چھان بین کر رہے ہیں۔ جلد ہی اسرائیلی فروٹ سعودی عرب میں داخلے کا پتا چلا لیا جائے گا۔