غلافِ کعبہ کی تیاری: جدت، سُرعتِ عمل کا ایک اور سنگ میل طے!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

کعبہ اللہ شریف کے غلاف [کسوہ] کی تیاری میں جدت اور اسے پہلے سے زیادہ خوبصورت اور جاذب نظر بنانے کی مساعی پر سعودی حکومت ہمیشہ داد تحسین کی مستحق رہی ہے۔ ہر آنے والے سال کے لیے غلاف خانہ کعبہ کو زیادہ پرکشش اور دیدہ زیب بنانے کے لیے ماہرین جس عرق ریزی اور جانفشانی سے کام کرتے ہیں وہ اپنی مثال آپ ہے۔ اب کی بار کسوہ کعبہ کی تیاری، اس کی جدت اور جاذب نظری کے ساتھ کام کی برق رفتاری کا ایک اور سنگ میل طے ہو گیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق غلاف خانہ کعبہ کی تیاری، کڑہائی اور سلائی اپنی مدت مقررہ سے بھی کم وقت میں مکمل کر کے ایک نئی مثال قائم کی گئی ہے۔ غلاف کعبہ کی تیاری جس برق رفتاری سے جاری ہے اور بیت اللہ کے تین اطراف کا غلاف اپنی مقررہ مدت میں مکمل کر لیا ہے وہ غلاف کی تیاری کے حوالے سے ایک اہم سنگ میل ہے۔

غلاف کی تیاری کے مخصوص کارخانے میں ماہر صناعوں کی شبانہ روز محنت کے نتیجے میں اللہ کے گھر کے غلاف کے تین حصے مکمل ہو چکے ہیں۔ اس کام کو جس عجلت اور برق رفتاری سے مکمل کیا گیا ہے وہ بھی ایک ریکارڈ ہے۔ خانہ کعبہ کے چوتھے اور آخری حصے کے غلاف کی تیاری کا عمل شروع کر دیا گیا ہے۔ توقع ہے کہ حسب معمول یہ حصہ بھی مدت مقررہ کے اندر مکمل کر لیا جائے گا۔

غلاف کعبہ کی تیاری کے مختص کارخانے کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر محمد باجودہ نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ غلاف کی تیاری میں ہمہ تن مصروف ماہرین اور خدام نے نہایت سرعت اور حسن انتظام سے خانہ کعبہ کے تین اطراف کا غلاف مکمل کر لیا ہے۔

ڈاکٹر باجودہ نے غلاف کی تیاری میں مصروف کارکنوں کی محنت اور خلوص کی تعریف کی اور کہا کہ بیت اللہ شریف کے خادم، اللہ کے گھر کے لباس کے کی تیاری بالکل ویسی ہی پیشہ ورانہ مہارت اور خلوص کے ساتھ کام کر رہے ہیں جس طرح دیگر پیشوں کے ماہرین خدمات انجام دیتے ہیں۔ بر وقت اور بہترین کام ہماری اولین ذمہ داری ہے۔ حرمین شریفین کمیٹی کے چیئرمین اور امام کعبہ الشیخ ڈاکٹر عبدالرحمان السدیس سمیت انتظامیہ کے دیگر عہدیداروں کی جانب سے بھی ہمیں غلاف کعبہ کی بروقت تیاری کی ہدایات دی گئی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ خانہ کعبہ کے تین اطراف کا غلاف مکمل کرلیا گیا اور چوتھے حصے کا غلاف تیاری کے مراحل میں ہے۔ پہلے مرحلے میں "حجر اسود" کی سمت کا 10.29 میٹر، دوسرے مرحلے میں باب ابراہیم کا 12.74 میٹر اور دونوں رُکنوں کی سمت کے 10,78 میٹر غلاف مکمل کرلیا گیا جبکہ ملتزم کا 12.25 میٹر غلاف جلد مکمل کر لیا جائے گا۔

نہایت بیش قیمت ریشمی کپڑے پر آیات قرآنی کی کشیدہ کاری کا کام تیزی سے جاری ہے۔ غلاف شریف کے 70 فی صد حصے پر سنہری تاروں کی مدد سے کڑھائی کا کام تقریبا مکمل ہے۔ انہوں نے بتایا کہ غلاف کعبہ کے چاروں اطراف مجموعی طور پر 47 میٹر ریشمی کپڑے کو 16 ٹکڑوں کو مربوط کیا گیا ہے۔ اس کے نیچے درمیانے سائز کے غلاف کے چھ ٹکڑے جوڑے جائیں گے جن کے کناروں کو سولہ برقی قمقموں سے مزین کیا گیا ہے۔

خانہ کعبہ کے غلاف میں ایک ٹکڑا خادم الحرمین الشریفین شاہ عبداللہ بن عبداللہ بن عبدالعزیز کی جانب سے ہدیہ کردہ بھی شامل ہے۔ یہ حصہ ملتزم کی جانب نصب کیا جائے گا۔ ارکان کعبہ کی سمت میں سورہ اخلاص کے سنہری دھاگے سے کی گئی کشیدہ کاری سے مزین چار ٹکڑے الگ سے جوڑے جا رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں