.

مکہ:''صلی علی نبینا''پراجیکٹ، اسوہ پیغمبر کا عکاس ہو گا

ماہرین قرآن و سنت تیار کرنے کیلیے یوینورسٹی اور لائبریری منصوبے کا حصہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مکہ کی گورنری اور میونسپلٹی کو مشترکہ طور پر ایک لاکھ مربع میٹر پر پھیلے کے ایک منفرد اور عظیم الشان منصوبے کی ذمہ داری دی گئی ہے۔ اس گراں قدر منصوبے کا مقصد نبی آخر الزمان صلی اللہ علیہ وسلم کے سچے اور سچے اسوہ حسنہ کا اظہار کرنا ہو گا۔

ایک پورے شہر پر پھیلے اس منصوبے کے ذریعے ان سازشوں کا توڑ کیا جائے گا جو نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے خلاف مختلف ملکوں میں جاری ہیں۔

منصوبے کیلیے حرم کعبہ کی حدود سے باہر الحرمین ایکسپریس وے پر جگہ کا انتخاب کیا گیا ہے۔ منصوبے کے تحت غیر مسلموں کو پیغمبر اسلام کی تعلیمات سے روشناس کرایا جائے گا۔

اسوہ نبی کو اجاگر کرنے والے اس نئے شہر میں مرکزی دفاتر کے علاوہ نمائش گاہ، یونیورسٹی، لائبریری، چھاپہ خانہ، ترجمہ مرکز، ہوٹلز وغیرہ شامل ہوں گے۔

نبی مکرم کی حیات طیبہ، آپ کے صحابہ رضوان اللہ علیہ اور اسلام کے حوالے سے ایک انسائیکلو پیڈیا بھی مرتب کیا جائے گا۔
منصوبے کے مطابق یہ انسائیکلو پیڈیا دنیا کے ضخیم ترین انسائیکلو پیڈیاز میں سے ایک ہو گا ۔ یہ انسائیکلو پیڈیا ساڑھے تین لاکھ صفحات کے ساتھ تقریبا 500 جلدوں پر مشتمل ہو گا۔ انسائیکلو پیڈیا کی رجسٹریشن وزارت اطلاعات میں کرا دی گئی ہے۔
بتایا گیا ہے کہ سعودی عرب، مصر اور ملائیشیا سمیت مختلف ممالک کے علما انسائکلیو پیڈیا کی 80 جلدوں کو تیاری کو آخری مرحلے میں لا چکے ہیں۔

اللہ سبحانہ وتعالی کے اسمائے حسنہ پر مشتمل نمائش بھی تیار کی جائے گی۔ لائبریری میں نبی کی سیرت طیبہ پر عربی و دیگر زبانوں میں لکھی گئی ہر کتاب فراہم کرنے کی کوشش کی جائے گی۔

اس نئے آباد کیے جانے والے شہر میں میڈیا سنٹر میں سیٹلائٹ کی مدد سے ٹی وی کی نشریات مانیٹر کرنے کے علاوہ ویب سائٹس بھی فروغ سیرت کیلیے استعمال کی جائیں گی۔

ترجمہ مرکز میں مختلف زبانوں کے ماہرین کی خدمات حاصل کی جائیں گی۔ جبکہ چھاپے خانے کیلیے وزارت اطلاعات سے اجازت نامہ لیا چکا ہے۔

''صلی علی نبینا'' پراجیکٹ کے تحت قائم ہونے والی یونیورسٹی قرآن و سنہ کے ماہر گریجوایٹس تیار کرے گی۔ جو نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے حقیقی پیغام کو عام کرنے کا ذریعہ بنیں گے۔