.

بھارتی صنعت کار کا سالگرہ پر خود کو سونے کی شرٹ کا تحفہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

دولت پاس ہوتو انسان کو نت نئے شوق سوجھتے ہیں اور وہ دنیا کی ہرچیز ،ہرنعمت خرید کرنے کی کوشش کرتا ہے۔ایسے ہی ایک صاحب بھارت کے مشہور صنعت کار پنکج پرکھ ہیں۔انھوں نے جمعہ کو اپنی پینتالیسویں سالگرہ کے موقع پر خود کو خالص سونے سے تیارکردہ سونے کی شرٹ کا تحفہ دیا ہے۔

مقامی میڈیا کی اطلاع کے مطابق وہ جب ممبئی کے نزیک واقع اپنے آبائی قصبے ییولا میں یہ شرٹ زیب تن کرکے نکلے تو سب کی نظریں ان کی جانب متوجہ ہوگئی تھیں۔

ڈیل میل نے مسٹر پرکھ کے حوالے سے بتایا ہے کہ شرٹ کی تیاری میں 18-22 قیراط خالص سونا استعمال کیا گیا ہے اور یہ عام قمیص ہی کی طرح پائیدار ہے کیونکہ اس کے اندر کپڑے کی دھاریاں ہیں۔

مسٹر پرکھ نے مزید بتایا ہے کہ ''اس کو بآسانی دھویا جاسکتا ہے اور عام کپڑے کی طرح سکھانے کے لیے لٹکایا جاسکتا ہے۔اس کی ہمیشہ کے لیے پائیداری کی ضمانت ہے۔اگر یہ پھٹ جائَے یا خراب ہوجائے تو اس کو فوری طور پر مرمت کیا جاسکتا ہے''۔

ان کا کہنا ہے کہ ''جب میری عمر پانچ سال تھی اور میں اسکول میں پڑھتا تھا تو مجھے اس وقت سونا پہننے کا بہت شوق ہوا کرتا تھا۔وقت کے ساتھ ساتھ اس شوق کو مزید جلا ملی ہے۔اس لیےمیں نے اپنی پینتالیسویں سالگرہ کے موقع پر خود کو سونے سے بنی ہی کسی چیز کا تحفہ دینا کا فیصلہ کیا ہے''۔

بتایا گیا ہے کہ اس شرٹ کو خالص سونے کے سات بٹن لگے ہوئے ہیں اور اس کو ممبئی کے علاقے پرل میں واقع شانتی جیولرز نے تیار کیا ہے۔مسٹر پنکج پرکھ نے اسی ہفتے اس کو وصول کرنے کے بعد پہلی مرتبہ زیب تن کیا تھا۔