.

ٹویٹر تمام برائی کا منبع ہے:سعودی مفتیِ اعظم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے مفتی اعظم شیخ عبدالعزیز آل الشیخ نے مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹویٹر کو جھوٹ اور برائی کا منبع قرار دے دیا ہے۔

انھوں نے سوموار کی شب نشر ہونے والے ایک ٹیلی ویژن شو کے دوران اپنے فتویٰ میں کہا ہے کہ ''اگر ٹویٹر کو درست طور پر استعمال کیا جائے تو اس سے حقیقی فائدہ مل سکتا ہے لیکن بدقسمتی سے اس کو غیر ضروری اور فضول امور کے لیے استعمال کیا جارہا ہے''۔

ان کا کہنا ہے کہ ''ٹویٹر تمام برائی اور تباہی کا منبع ہے۔لوگ اس کو معلومات کا قابل اعتبار ذریعہ سمجھ کر رجوع کرتے ہیں مگر یہ جھوٹ اور غلط بیانی کا ذریعہ ہے''۔

واضح رہے کہ سعودی مردوخواتین کی بڑی تعداد اپنے سمارٹ فونز پر ٹویٹر کا استعمال کرتی ہے۔اس طرح یہ ان کے آزادیِ اظہار کا ایک اہم ذریعہ ہے۔تاہم سعودی صارفین کو انٹرنیٹ پر شتر بے مہار آزادی حاصل نہیں ہے اور حکومت نے بعض قدغنیں بھی عاید کررکھی ہیں۔اس کے علاوہ سعودی معاشرے میں مردوخواتین کو آزادانہ اختلاط کی اجازت نہیں ہے،ٹویٹر یا سماجی روابط کی دوسری ویب سائٹس پر نامحرم مردوخواتین کے درمیان روابط (چیٹنگ) کو معیوب سمجھاجاتا ہے اور علماء کرام اس کی مسلسل حوصلہ شکنی کرتے رہتے ہیں۔