.

سعودی عرب :قرآن مجید کے اغلاط والے نسخے ضبط

اغلاط والے نسخے بیرون ملک سے سعودی عرب لائے گئے تھے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں حکام نے قرآن مجید کے طباعتی اغلاط والے نسخوں ،دوسرے مذاہب اور فرقوں سے متعلق متن کی غلط تشریح والے نسخوں کو ضبط کر لیا ہے۔

سعودی عرب کے اسلامی امور ،وقف ،دعوت اور مشاورت کے وزیر شیخ صالح آل شیخ نے صحافیوں کو بتایا ہے کہ قرآن مجید کے یہ نسخے سعودی مملکت سے باہر شائع کیے گئے تھے اور انھیں مساجد میں بعض خیر خواہان تقسیم کررہے تھے۔

انھوں نے بتایا ہے کہ ''قرآن مجید کے یہ نسخے بعض عرب اور اسلامی ممالک میں شائع کیے گئے تھے اور انھیں وہاں سے سعودی عرب لایا گیا تھا۔ان نسخوں کی اشاعت کے وقت احتیاط نہیں برتی گئی تھی اور بعض خیرخواہان ان میں موجود اغلاط سے آگاہ ہوئے بغیر ہی تقسیم کررہے تھے اور وہ یہ خیال کررہے تھے کہ ہر نسخہ غلطیوں سے مبرا ہے''۔

سعودی وزیر کے مطابق قرآن مجید کے ان نسخوں میں بعض آیات میں اغلاط تھیں اور اغلاط والے بعض نسخے مکہ مکرمہ میں مسجد الحرام کے نزدیک سے بھی ملے ہیں۔انھوں نے قرآن مجید کی اغلاط سے پاک طباعت اور اشاعت کے لیے شعور اجاگر کرنے کی ضرورت پر زوردیا ہے۔