.

دو سالہ بچے نے امریکی ماں کی جان لے لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا میں ایک دو سالہ بچے نے حادثاتی طور پر اپنی ماں پر گولی چلا دی، جس کے نتیجے میں یہ خاتون ہلاک ہو گئی۔ ایک شاپنگ سینٹر میں اس بچے نے اپنی ماہ کے پرس سے پستول نکالا اور گولی چلا دی۔

امریکی حکام کے مطابق یہ واقعہ آئی ڈاہو ریاست کے شمالی حصے میں 'وال مارٹ' نامی شاپنگ سینٹر میں پیش آیا، جہاں یہ خاتون خریداری میں مصروف تھی، جب کہ اس کے بچے نے اس کی پرس سے پستول نکال کر ناسمجھی میں اس پر گولی چلا دی۔ یہ خاتون اس واقعے میں ہلاک ہو گئی۔

حکام کے مطابق 29 سالہ ویرونیکا جے رُٹلییج نامی یہ خاتون اس شاپنگ سینٹر میں چار بچوں کے ہمراہ شاپنگ کرنے آئی تھی۔ کُٹینائی کاؤنٹی کے شیرف دفتر کے ایک ترجمان نے خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس کو بتایا کہ اس خاتون کا تعلق آئی ڈاہو کے جنوب مشرقی حصے سے تھا اور یہ اپنے رشتے داروں سے ملنے ریاست کے شمالی حصے میں آئی ہوئی تھی۔

ان کا کہنا تھا کہ اس خاتون نے اپنے دو سالہ بچے کو شاپنگ ٹرالی میں چھوڑا اور وہاں اس کا پرس بھی رکھا تھا، ’اس بچے نے پرس سے کم کیلیبر کا یہ پستول نکالا اور ایک گولی فائر کر دی۔‘

حکام کے مطابق اس واقعے کے بعد شاپنگ سینٹر کی جانب سے فوری امداد کے لیے رابطہ کیا گیا، تاہم پولیس اور امدادی کارکنوں کے پہنچنے تک یہ خاتون دم توڑ چکی تھی۔

حکام کے مطابق یہ واقعہ مقامی وقت کے مطابق صبح دس بج کر بیس منٹ پر پیش آیا اور اس وقت اس خاتون کا شوہر شاپنگ سینٹر میں موجود نہیں تھا اور وہ اس حادثے کے کچھ دیر بعد شاپنگ سینٹر پر پہنچا۔ بتایا گیا ہے کہ اس واقعے کے بعد تمام بچوں کو اس خاندان کے رشتہ داروں کے ہاں منتقل کر دیا گیا ہے۔

اس واقعے کے بعد اس اسٹور کو بھی پورا دن بند رکھا گیا۔ وال مارٹ کی ترجمان بروک بوخانن کے مطابق، ’ہمیں اس واقعے پر انتہائی افسوس ہے اور اس سلسلے میں مقامی شیرف کے محکمے کے ساتھ کام کیا جا رہا ہے، تاکہ معلوم ہو سکے کہ اس واقعے کی وجوہات کیا رہیں۔‘