بومدین کی ترکی آمد کے بعد شام میں موجودگی!

فرانس کو انتہائی مطلوب دوشیزہ کے بارے ترک حکام کی وضاحت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
5 منٹس read

ترک سیکیورٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ فرانسیسی دارلحکومت پیرس کی ایک کوشر گراسری مارکیٹ کے حملہ آور امیدی کُولی بالی کی مبینہ گرل فرینڈ حیات بُومدین دو جنوری کو ترکی داخل ہوئی، تاہم اغلب امکان یہی ہے کہ اس وقت وہ شام میں موجود ہے۔ کولی بالی کو فرانسیسی سیکیورٹی حکام نے ایک کارروائی کے دوران ہلاک کر دیا تھا۔

نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر ترک ذرائع نے خبر رساں ادارے 'اے ایف پی' کو بتایا "کہ بومدین دو جنوری کو ترکی کے جنوب مشرقی شہر اورفا آئی۔" ذرائع نے بتایا کہ بومدین میڈرڈ۔استنبول کے ریٹرن ٹکٹ پر ترکی آئی۔

اس سے قبل ایک فرانسیسی سیکیورٹی اہلکار نے دعوی کیا تھا کہ حیاہ بومدین اوائل جنوری سے ترکی میں موجود ہے۔ فرانسیسی دوشیزہ کی پیرس میں سیکیورٹی حکام کے ریسیکو آپریشن میں اغواء کار کولی بالی سے دوستی بتائی جاتی ہے، جسے پولیس نے ہلاک کر دیا تھا۔

فرانسیسی پولیس بومدین سے تفتیش کا حکم نامہ جاری کر چکی ہے تاکہ اس بات کا تعین کیا جا سکے کہ آیا پیرس حملوں میں اس کا کوئی کردار بنتا ہے یا نہیں۔

الجزائری نژاد فرانسیسی دوشیزہ حیات بُومدین کی عمر چھبیس برس ہے اور اُس کی تصاویر فرانس پولیس کی جانب سے جاری کر دی گئی ہیں۔ مشرقی پیرس کی مارکیٹ پر حملہ کرنے والے دہشت گرد امیدی کُولی بالی کی پارٹنر بھی یہی خاتون ہے جو اب فرانسیسی پولیس کو انتہائی مطلوب ہے۔ حیات بُو مدین کی سب سے پہلے تصویر معتبر روزنامے 'لُو موند' نے شائع کی تھی۔ اِس تصویر کے ساتھ عوام کے لیے پولیس کی اپیل بھی شائع کی گئی کہ وہ اِس خاتون کے حوالے سے اطلاع فراہم کریں۔

حیات بُومدین کے حوالے سے پولیس نے عوام کو آگاہ کیا ہے کہ 'وہ اِس سے یقینی طور پر محتاط رہیں کیونکہ اِس خاتون کے پاس مہلک ہتھیار ہونے کی وجہ سے وہ خطرناک ہو سکتی ہے۔' پولیس کی جانب سے جو تصویر فراہم کی گئی ہے، اُس کے مطابق وہ خوابیدہ آنکھوں والی نوجوان لڑکی ہے اور اُس کے بالوں کی رنگت براؤن ہے۔ اسی خاتون کو پولیس نے سن 2010 میں طلب کر کے دہشت گرد امیدی کُولی بالی کے بارے میں پوچھ گچھ کی تھی۔ یہ بھی خیال کیا گیا ہے کہ جب جنوبی پیرس خاتون پولیس اہلکار کو جب کولی بالی نے قتل کیا تھا تو وہ اُس کے ہمراہ تھی۔

اِسی طرح کوشر گراسری مارکیٹ میں حملے میں بھی اُس کے ملوث ہونے کا امکان ظاہر کیا گیا ہے۔ کوشر مارکیٹ میں زخمی یا ہلاک ہونے والوں میں وہ شامل نہیں ہے۔ دوسری جانب اُس کا پارٹنر امیدی کولی بالی بتیس برس کا تھا اور وہ ماضی میں کئی مجرمانہ کارروائیوں میں شریک رہ چکا ہے اور انجام کار وہ ایک بنیاد پرست مسلمان کے طور پر ایک دہشت گردانہ کارروائی کے دوران مارا گیا۔ امیدی نے ایک ٹیلی وژن اسٹیشن BFMTV سے بات کرتے ہوئے دعویٰ کیا تھا کہ اس کا تعلق اسلامک اسٹیٹ کے جہادی گروپ سے ہے۔ جمعے کے روز ہلاک ہونے والے دہشت گرد بھائیوں نے اپنا تعلق جزیرہ نما عرب میں القاعدہ کی شاخ سے ظاہر کیا تھا۔

امیدی کولی بالی نے جیل میں شریف کاؤشی کی ترغیبات پر مذہب تبدیل کرنے اور انتہا پسندانہ عقائد کی جانب راغب ہونے کا فیصلہ کیا تھا۔ پیرس کے چیف پراسیکیوٹر فرانسوا مولیں کو یقین ہے کہ حیات بُومدین کا شریف کاتشی کی گرل فرینڈ کے ساتھ بھی مسلسل ٹیلی فونک رابطہ ہے۔ اسی باعث تفتیش کار اب شد و مد سے ٹیلی فونک ڈیٹا کو کھوج رہے ہیں۔ اِس وقت فرانسیسی پولیس کی تفتیش کا مرکز حیات بومدین کو قرار دیا جا رہا ہے۔

امیدی کولی بالی کو جب گزشتہ برس مئی کے مہینے میں جیل سے رہائی ملی تھی تو وہ سیدھا حیات بُومدین کے پاس گیا تھا۔ حیات بُومدین کے بارے میں پولیس کو یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اُس کی پرورش سگے والدین نے نہیں کی ہے۔ اس نے سن 2009 میں کولی بالی کے ساتھ مذہبی طریقے سے شادی بھی کر لی تھی۔ اخبار لُو موند نے کولی بالی اور بُو مدین کی کئی تصاویر شائع کی ہیں جن میں وہ ہتھیار اٹھائے ہوئے ہیں۔ ایک اور اخبار کے مطابق بومدین کو نوکری سے فارغ کر دیا گیا تھا کیونکہ وہ سر سے پاؤں تک حجاب و نقاب کرنا چاہتی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں