.

حوثیوں کے میزائل حملے میں پہلے امریکی شہری کی ہلاکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں حوثی شدت پسندوں کی بغاوت کے خلاف سعودی عرب کی قیادت میں جاری فوجی آپریشن کے دوران حوثیوں کی جانب سے ’’ہاون‘‘ راکٹ حملے میں ایک عام امریکی شہری کی ہلاکت کی تصدیق ہوئی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کےمطابق جمال اللبنی نامی امریکی شہری کا تعلق ریاست کیلیفورنیا کے اوکلینڈ شہرسے ہے۔ وہ دو ماہ قبل یمن میں موجود اپنی اڑھائی سالہ بیٹی اور حاملہ بیوی کو لینے صنعاء پہنچا تھا تاہم ان کی واپسی مسلسل تاخیر کا شکار ہوتی رہی یہاں تک کہ جمال کو موت نے آلیا۔

جمال اللبنی کی حوثی شدت پسندوں کے راکٹ حملے میں ہلاکت کی خبرKPIX 5 نامی ایک نیوز چینل نے بریک کی، جسے بعد ازاں دیگر ٹیلی ویژن چینلوں نے بھی نشر کیا۔ رپورٹس کے مطابق اللبنی جنوبی یمن کے شہر عدن میں ایک مسجد میں نماز کی ادائیگی کے بعد اپنے ایک دوسرے عزیز کے ہمراہ باہر نکلا ہی تھا کہ اچانک ان کے قریب ایک ’’ہاون‘‘ راکٹ آگرا۔ راکٹ حملے میں البنی شدید زخمی ہوا تاہم اسپتال پہنچائے جانے سے قبل ہی وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔

البنی کے اہل خانہ اور دیگر اقارب نے تصدیق کی ہے کہ اس کی ہلاکت حوثیوں کی جانب سے داغے گئے ایک راکٹ کے پھٹنے سے ہوئی ہے۔ امریکی شہر اوکلینڈ میں موجود جمال اللبنی کے ایک قریبی عزیز نے بتایا کہ البنی کا امریکا میں پٹرول اسٹیشن تھا جبکہ اس کی بیوی اور ایک اڑھائی سالہ بیٹی یمن میں تھی۔ دو ماہ قبل جنگ یمن میں حالات خراب ہوئے تو اللبنی انہیں واپس امریکا لانے کے لیے صنعاء پہنچا۔ اپنی وفات سےدو دن قبل اس کا اوکلینڈ میں موجود اپنےاہل خانہ سے آخری رابطہ ہوا۔ اہل خانہ یمن کے بیشتر ہوائی اڈوں کے تباہ ہونے کی وجہ سے پریشان تھے،تاہم اللبنی نے بتایا کہ وہ سڑک کے راستے پہلے عمان پہنچیں گے۔ وہاں سے ہوائی جہاز کے ذریعے مصر سے ہوتے ہوئے امریکا روانہ ہوں گے۔ تاہم دو ہی روز بعد ایک راکٹ حملے میں اس کی ہلاکت کی بھی خبر آگئی۔

امریکی اخبار’’ڈیلی گزٹ‘‘ کی ویب سائیٹ پر شائع ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ جمال اللبنی کے ہمراہ اس کا ایک چودہ سالہ کزن بھی ہلاک ہوا ہے۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ کو جمال اللبنی کی اپنی بیٹی کے ہمراہ لی گئی ایک تصویربھی ملی ہے۔ بہ ظاہر ان کی یہ تصویر یمن کے جنوبی شہر عدن میں لی گئی ہے، جہاں انہیں ساحل سمندر پے دکھایا گیا ہے۔ چونکہ یمن میں جاری خانہ جنگی کے باعث بڑی تعداد میں غیر ملکی سمندری راستے جان بچانے کی کوشش کررہے ہیں۔ جمال اللبنی بھی اپنی اہلیہ اور بچی کے ہمراہ عدن پہنچا مگر وہ کسی کشتی پر سوار ہونے سے قبل ہی ہاون راکٹ کا شکار ہوگیا۔

یمن کی مقامی ویب سائیٹ ’’اب پریس‘‘ کی رپورٹ کے مطابق حوثیوں کے راکٹ حملے میں مارے جانے والے امریکی شہری کا پورا نام جمال صالح عبد ربہ اللبنی تھا۔ اسے عدن کے بین الاقوامی ہوائی اڈے کے قریب ایک راکٹ حملے کا نشانہ بنایا گیا۔ رپورٹ کے مطابق جمال اللبنی کی ہلاکت کے بارے میں امریکی وزارت خارجہ کو جلد ہی علم ہوگیا تھا۔