.

مکانات کے بھاری کرائے، سعودیوں کی خانہ آبادی میں مزاحم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں رہائشی مکانات اور فلیٹس کے کرایوں میں ہوشربا اضافے کی باعث متعدد نوجوانوں کی شادی کے خواب پورے نہ ہونے کی راہ میں بڑی رکاوٹ بن رہے ہیں۔ اس امر کا انکشاف جدہ میں شادی اور عائلی مشوروں کے لئے سرگرم ایک خیراتی انجمن کی جانب کروائے گئے سروے میں کیا گیا ہے۔

رائے عامہ کے سروے میں حصہ لینے والوں میں سے 93 فیصد نے کرایوں اور مکانوں کی قیمتوں میں اضافے کی شکایت کی ہے۔ سروے میں شرکت کرنے والوں میں نوجوانوں کی بڑی تعداد ہے۔

انجمن کے صدر احمد سلطان العمری کا کہنا ہے کہ نوجوان مرد وخواتین کو شادی کے لئے ان کی تنظیم مدد فراہم کرتی ہے۔ انہیں بہتر خاندانی زندگی گزارنے اور اخراجات کم کرنے کے طریقے بھی بتائے جاتے ہیں۔

العمری کا کہنا تھا کہ نجی شعبے کو شادی کرانے کے خواہشمند نوجوانوں کی مدد اور اخراجات میں کمی لانی چاہئیے ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ شادی اور خاندانی زندگی کی رہنمائی کے لئے قائم خیراتی ادارے اکیلے اس بوجھ کو اٹھانے سے قاصر ہیں۔ تمام شعبہ جات کو اس معاملے میں مدد کرنی چاہئیے ہے۔

انہوں نے بتایا کہ اسلام جلدی شادی کی تبلیغ کرتا ہے اور معاشرے کو چاہئیے کہ وہ شادی کرنے والے نوجوانوں کی مدد کرے تاکہ وہ بغاوت اور بدکرداری سے دور رہ سکیں۔