.

کعبۃ اللہ کو 15 محرم کو سالانہ غسل دیا جائے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مکہ مکرمہ میں مسجد الحرام میں جاری توسیع منصوبے کے پیش نظر عبادت گزاروں اور زائرین کی سہولت اور تحفظ کی خاطر اس سال کعبۃ اللہ کو 15 محرم الحرام کو غسل دیا جائے گاتاکہ وہاں مناسک کی ادائی میں کسی قسم کی کوئی رکاوٹ نہ پڑے۔

سعودی عرب کی سرکاری خبررساں ایجنسی ایس پی اے نے مسجد الحرام اور مسجد نبوی کے امور کے ذمے دار ادارے (پریزیڈینسی) کے ترجمان احمد المنصوری کے ایک بیان کے حوالے سے بتایا ہے کہ اس سلسلے میں شاہی دیوان نے نظام الاوقات کی منظوری دے دی ہے۔

واضح رہے کہ ہر سال رمضان المبارک کے آغاز سے قبل سالہا سال سے جاری روایت پر عمل کرتے ہوئے کعبۃ اللہ کو غسل دیا جاتا ہے اور سعودی فرمانروا اپنے ہاتھوں سے اللہ کے گھر کو غسل دیتے ہیں۔گذشتہ سال رمضان سے قبل خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے کعبۃ اللہ کو غسل دیا تھا۔اس موقع پر ولی عہد شہزادہ محمد بن نایف بن عبدالعزیز بھی ان کے ہمراہ تھے۔

مگر اس سال تعمیراتی کاموں کی وجہ سے یہ غسل محرم میں دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔مسجد الحرام کی تعمیر وتوسیع کا بڑا منصوبہ سعودی عرب کے مرحوم فرمانروا شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز کے دور حکومت میں شروع کیا گیا تھا۔اس منصوبے کے دو مراحل مکمل ہوچکے ہیں اور اس وقت تیسرے مرحلے پر تیزی سے کام جاری ہے۔