.

مرکزی شاہراہ پر برقع پوش خواتین کے درمیان مُکے بازی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

انٹرنیٹ پر ان دنوں ایک نئی وڈیو گردش میں ہے جس میں دو برقع پوش خواتین ایک دوسرے کے ساتھ گتھم گتھا نظر آرہی ہیں۔ ابھی تک یہ نہیں معلوم ہوسکا کہ یہ وڈیو خلیجی ممالک کے کس شہر کی ہے اور کتنا عرصہ پرانی ہے۔ وڈیو کو اتوار کے روزWorld Breaking News ویب سائٹ کے یوٹیوب چینل پر پوسٹ کیا گیا۔ دنیا بھر کے میڈیا میں مقبول ہوتی خبر کی وڈیو کو "العربیہ ڈاٹ نیٹ" آپ کے لیے پیش کررہا ہے۔

وڈیو میں ہم دیکھتے ہیں کہ دو خواتین کے درمیان اچانک سے لڑائی شروع ہوگئی جس کی وجہ سے مرکزی شاہراہ پر سگنل کا پوائنٹ کشتی اور باکسنگ کے اکھاڑے میں تبدیل ہوگیا۔ دونوں خواتین نے دل کھول کر ایک دوسرے پر مکوں کی بارش کر دی۔ اس دوران سگنل پر کھڑی گاڑیوں میں مرد حضرات بھی موجود تھے تاہم کوئی بھی اس ایکشن سین کو ختم کرانے کے لیے اتر کر قریب نہ آیا۔ انہی میں سے کسی نامعلوم شخص نے واقعے کی وڈیو بنائی۔

برطانوی اخبار "ڈیلی میل" کے مطابق موبائل سے وڈیو بنانے والے ایک گاڑی کے ڈرائیور کا کہنا ہے کہ " میں سمجھتا ہوں کہ ان میں سے ایک خاتون نے سڑک پر دوسری خاتون کی گاڑی کا راستہ روکا تھا"۔ واضح رہے کہ وڈیو میں گاڑی میں سوار صرف مردانہ آواز سنائی دے رہی ہے جس میں ایک مرد اپنے ساتھی سے کہہ رہا ہے کہ "ان کو چھوڑ دو ان کو چھوڑ دو"۔ بولنے والے کا ساتھی غالبا یہ ارادہ کررہا تھا کہ وہ اتر کر دوںوں خواتین میں بیچ بچاؤ کرائے گا۔

دونوں خواتین نے مکے اور لاتیں آزمانے کے ساتھ ساتھ اپنے جوتوں سے بھی ایک دوسرے کی خبر لی۔ ان میں سے ایک خاتون نے مرکزی شاہراہ پر سگنل کے ساتھ بنے سیمنٹ کے فرش پر دوسری خاتون کو چھاپ لیا اور خوب دھنائی کی۔ اس دوران ایک موقع پر وہ دوسری خاتون کے سر پر بھرپور شاٹ لگانے والی تھی کہ اچانک وڈیو ختم ہوگئی اور یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ آیا اس زنانہ جنگ کا اختتام دونوں خواتین کے درمیان مصالحت کی صورت میں ہوا یا نہیں۔