.

عالمی جرائم پیشہ مافیا کی خواتین سرغنائیں!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عموما یہ سمجھا جاتا ہے کہ بین الاقوامی سطح پر خطرناک جرائم میں ملوث مافیا کی قیادت کسی نہ کسی مرد کے ہاتھ میں ہوتی ہے مگر ایسا ہرگز نہیں۔ جرائم پیشہ گروپوں اور بین الاقوامی خطرناک مافیا کے ایسے گروپ بھی موجود ہیں جن کی قیادت عورتوں کے ہاتھوں میں ہے اور وہ عورتیں دنیا کی نہایت خطرناک خواتین گردانی جاتی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کےمطابق اس وقت دنیا بھر میں ایسے ان گنت بین البراعظمی مافیا موجود ہیں جن کی قیادت عورتوں کے پاس ہے۔ ان میں سے چند ایک درج ذیل ہیں۔

کلوڈیا اوچو فیلکس:

کلوڈیا فیلکس میکسیکو میں 'لوس اونتراس' کی سربراہ ہے۔ موصوفہ خطرناک جرائم کے خواتین کے ایک گروپ کی نگرانی کرتی ہے۔ انسٹا گرام پر ہیروئن کی طرح مشہور فیلکس ٹارگٹ کلنگ سمیت کئی سنگین وارداتوں میں ملوث رہی ہیں۔

آنا گریسٹینا:

آنا گریسٹیناکی عمر45 سال ہے۔ جرائم میں ملوث ہونے کی وجہ سے وہ 6 ماہ قید کاٹنے کے بعد پانچ سال کے لیے گھر پر نظربندی کی سزا پوری کررہی ہے۔ مین ہٹن کی رہائشی مسز گریسٹینا نے اعتراف کیا ہے کہ وہ 15 سال تک قحبہ خانہ چلاتی رہی ہے جہاں سے لڑکیاں جنسی ہوس پوری کرنے کے لیے سپلائی کی جاتی تھیں۔

جوڈی موران:

جوڈی موران اب بوڑھی ہوچکی ہے اور کوئی زیادہ کام نہیں کرسکتی لیکن اس نے زلی کول نامی یک جرائم پیشہ گروہ کے سربراہ سے شادی کی۔ شوہر کی وفات کے بعد اس نے لویس موران نامی ایک جرائم پیشہ گروپ کے سربراہ سے شادی کرلی۔ دوسرے خاوند کی وفات کے بعد وہ اس گروپ کی خود ہی سربراہ بن گئی۔

سانڈیرا اویلا بلتران:

سانڈرا اویلا پلتران ایک نہایت زیرک، چلاک اور مکار عورت ہے جو میکسیکو میں منشیات کے فروغ میں ملوث گروپ کی سربراہ رہ چکی ہے۔ وہ اس کے دونوں شوہر سابقہ فوجی افسر ریٹائرڈ ہیں۔

ماریا لیون:

امریکی ریاست لاس اینجلس کے لوگ ماریا لیون کے نام سے اچھی طرح واقف ہیں۔ وہ قتل، اغواء برائے تاوان، انسانی اسمگلنگ اور منشیات کی اسمگلنگ جیسے سنگین جرائم کی مرتکب رہی ہے۔ امریکی پولیس نے اس کی گرفتاری کی کئی سال کوششیں کیں مگر وہ ہر بار پولیس سے بچ نکلنے میں کامیاب ہوجاتی۔

لیون کی گرفتاری کے بعد پتا چلا کہ اس نے جرائم پیشہ گروپ کے عناصر کے ساتھ غیر قانونی جنسی تعلقات کے ذریعے 13 بچوں کو بھی جنم دیا۔ سنہ 2008ء میں امریکی پولیس نے لیون کی گرفتاری کے لیے اس کے ایک مشتبہ ٹھکانے پر چھاپہ مارا اور پولیس کے ساتھ مقابلے میں اس کا لیون کا ایک بیٹا ہلاک ہوگیا جب کہ لیون خود فرار ہوگئی مگر وہ بیٹے کی آخری رسومات کی ادائیگی میں دوبارہ گھر لوٹی تو پولیس نے اسے حراست میں لے لیا۔