.

دولہا میاں شادی کو 15 منٹ سے زیادہ برداشت نہیں کرسکے !

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بہت سے مرد ازدواجی زندگی کی پابندیوں کا طوق اپنے گلے میں ڈالنا پسند نہیں کرتے لیکن وہ کم از کم اپنی شادی کی تقریب کے دوران اس احساس کو چھپانے اور مسرت کا اظہار کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ تاہم سوشل میڈیا پر گردش کرنے والے ایک وڈیو کلپ میں جس کو برطانوی اخبار "ڈیلی میل" نے بھی جاری کیا ہے.. ایسا نظر آتا ہے کہ ایک شوہر ایسا بھی ہے جو ازدواجی کو 15 منٹوں سے زیادہ برداشت نہیں کر سکا !

دولہا اور دلہن دونوں اپنے اہل خانہ اور دوست احباب کے درمیان تقریب سے لطف اندوز ہو رہے تھے۔ گلاب کے پھولوں سے بھرا ہال موسیقی کے ساتھ نغموں سے گونج رہا تھا۔ اس دوران شادی کا کیک کاٹنے کا وقت آ گیا۔

پہلے دولہا نے اپنی خوب صورت شریک حیات کو کیک کھلایا اور اس کے بعد دلہن کی باری آئی کہ وہ جذبہ شوق سے سرشار دولہا کے منہ کو میٹھا کرے۔

بے چاری دلہن نے اس موقع پر اپنے شوہر کے ساتھ ہلکا پھلکا مذاق کرنے کا سوچا اور اسے فوری طور پر کیک نہیں کھلایا۔ دلہن ازراہ مذاق کیک والے چمچے کو دولہا کے منہ کے قریب لے جاتی اور پھر دور کر دیتی۔ دلہن نے اس حرکت کو دہرایا تاہم یہ مذاق دولہا میاں کو انتہائی ناگوار گزرا اور اس نے شدید غصے کے عالم میں دلہن کے ہاتھ پر زور دار طریقے سے اپنا ہاتھ مارا جس کے نتیجے میں چمچہ کیک سمیت دور جا گرا۔

اس طرح مختصر ترین ازدواجی زندگی شروع ہونے سے پہلے ہی ختم ہوگئی۔

برطانوی اخبار نے وڈیو کا مقام ، وقت اور دولہا دلہن کی شہریت کے بارے میں نہیں بتایا۔