.

پاکستانی ڈرائیور نے کروڑ پتی کفیلہ کی میراث میں حصہ مانگ لیا

پاکستانی کی مبینہ سعودی بیوی کا انتقال ہوچکا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان سے تعلق رکھنے والے ایک ڈرائیور نے فوت ہونے والی اپنی کروڑ پتی کفیلہ سے شادی کے ثبوت پیش کرتے ہوئے اس کی شرعی میراث میں حصہ فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق پاکستانی ڈرائیور کی جانب سےسعودی عرب کی فیملی کورٹ میں ایک درخواست دائر کی گئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ اس نے اپنی کروڑ پتی کفیلہ کے ساتھ شادی کر رکھی تھی۔ مدعی نے کروڑ پتی کفیلہ سے شادی کی دستاویزات اور دیگر ثبوت بھی پیش کیے ہیں۔ ساتھ ہی عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ وہ اسے کروڑ پتی [اہلیہ] جو اس کی کفیلہ بھی رہی ہے، سے وراثت سے حصہ دلوائے۔

پاکستان سے تعلق رکھنے والے شہری اور سعودی کروڑ پتی کےخاتون کے مبینہ شوہر کا کہنا ہے کہ اس نے کئی سال قبل سعودی عرب میں ایک دولت مند خاتون کے ہاں بہ طور ڈرائیور ملازمت شروع کی تھی۔ بعد ازاں دونوں رشتہ ازدواج میں منسلک ہوگئے۔ شادی ہونے کے کچھ عرصے بعد ان میں ناراضی ہوگئی تھی مگر بیوی کو طلاق نہیں ہوئی اور وہ اسی طرح فوت ہوگئی تھی۔

کروڑوں ریال مالیت کا ترکہ چھوڑ کر فوت ہونے والی خاتون کے اقارب کا کہنا ہے خاتون کو لاحق بیماری میں شدت کی ایک وجہ شوہر کی لاپرواہی بھی تھی جس کے نتیجے میں وہ جاں بر نہ ہوسکی۔ خاتون کے اہل خانہ نے پاکستانی شہری پر خاتون کے قتل کا سبب بننے کا الزام عاید کرتے ہوئے اس کے خلاف عدالت میں جوابی دعویٰ دائر کرنے کا اعلان کیا ہے۔