.

بلند چٹان پر بچے کی تصویر سعودی عرب میں سوش میڈیا پرشدید عوامی ردعمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سیلفی کے متوالے اپنے شوق کی تکمیل میں بعض اوقات جان جوکھوں میں ڈال دیتے ہیں، تاہم سعودی عرب کے شہر طائف سے سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک تصویر دیکھ کر اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ منفرد تصویر بنانے کے شوق میں لوگ کیسے اپنے لخت جگر کی جان سے بھی کھیلنے سے گریز نہیں کرتے۔ سوشل میڈیا پر اس تصویر پر بہت زیادہ تنقید کی جا رہی ہے جس میں والدین نے اپنے شیر خوار بچے کو طائف کے بلند ترین پہاڑی الھدی پر بنائی فصیل کی دیوار پر لٹا رکھا ہے۔

سوشل میڈیا بلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر پر ایک ہیش ٹیگ بنا دیا گیا ہے ۔ لاپرواہی کےہمراہ نامی ہیش ٹیگ پر بچے والدہ کے خطرناک اقدام پر شدید تنقید کی جا رہی ہے کہ جس نے محض ایک تصویر بنوانے کے شوق میں اپنے جگر کے ٹکڑے کی زندگی کو یقینی خطرے سے دوچار کیا۔

ٹویٹر پر موجود اس تصویر پر تبصرہ کرتے ہوئے متعدد صارفین کا کہنا تھا کہ ایک طرف کو دنیا میں بہت سے لوگ اولاد کی نعمت سے محروم ہیں جبکہ دوسری جانب جنہیں اللہ نے یہ نعمت دی ہے وہ اس کے حوالے سے ایسی غیر ذمہ دارانہ حرکتیں کر رہے ہیں جن سے ان کی اپنے بچوں کی پرورش کے بارے میں اہمال ثابت ہوتا ہے۔