.

کوسٹاریکا کے صدر نے صحافیوں کے سامنے بِھڑ نگل ڈالی !

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کوسٹاریکا کے صدرLuis Guillermo Solís نے جمعے کے روز ملک میں اسفلٹ (تارکول) کی ایک فیکٹری کا افتتاح کیا۔ اس موقع پر مقامی صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے صدر لوئس کو ایسے نادر تجربے سے گزرنا پڑا جو وہ مدتوں فراموش نہیں کرسکیں گے۔

گفتگو کے دوران ایک بِھڑ "ڈرون" طیارے کی طرح ان کے چہرے کے قریب آئی اور موقع پاتے ہی لوئس کے مُنہ میں داخل ہو گئی۔ لوئس نے اس جرات مند بِھڑ کی دراندازی محسوس کرنے کے بعد مُنہ میں بڑبڑانے کا اظہار کیا اور پھر اس "جسارت" کی مرتکب بِھڑ کو نگل لیا۔ اس منظر کو کوسٹاریکا میں شہریوں کی بڑی تعداد نے ٹیلی ویژن اسکرین کے ذریعے دیکھا۔

بِھڑ نگلنے کے بعد صدر لوئس نے بادل نخواستہ قہقہہ لگاتے ہوئے کہا "میں اس کو کھا چکا ہوں.. میں نے بِھڑ کھا لی"۔

اس موقع پر لوئس کے ہمراہ موجود افراد میں سے کسی نے انہیں پانی کی بوتل دی تا کہ وہ اسے پی کر اپنی گفتگو جاری رکھیں۔ لوئس کا کہنا تھا کہ "میں نے اس اڑتے کیڑے کو اپنے چہرے کے گرد منڈلاتے ہوئے دیکھ لیا تھا مگر یہ نہیں سوچا تھا کہ وہ میرے مُنہ کے اندر داخل ہو جائے گا"۔ کوسٹاریکا کے صدر کے مطابق بچپن میں پڑوسیوں کے بچوں کے ساتھ کھیلتے ہوئے بھی ان کے ساتھ اس طرح کا واقعہ پیش آ چکا ہے تاہم اس وقت ان کے مُنہ میں غالبا شہد کی مکھی داخل ہوئی تھی۔