.

مصر: نکاح خواں کی بیٹی کی رسم نکاح کے دوران ناگہانی موت!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

حال ہی میں انڈونیشیا میں ایک قاری کے تلاوت کلام پاک کے دوران اچانک انتقال کی ویڈٰیوں لاکھوں مسلمانوں کو دکھی کردیا تھا، ایسا ہی ایک واقعہ ان دنوں مصرمیں پیش آیا ہے جہاں ایک نکاح خواں اپنی بیٹی کی تقریب نکاح کے دوران نکاح پڑھاتے ہوئے اچانک انتقال کرگیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق یہ واقعہ شمالی مصر کی القلیوبیہ گورنری کے طوخ سینٹر میں پیش آیا جب ایک مقامی نکاح خوان مرسی خلیل سلامہ کلمہ شہادت پڑھتے ہوئے اپنی بیٹی کے نکاح کے وقت انتقال کرگیا۔ عین تقریب نکاح میں لڑکی کے والد کے انتقال نے شادی کی خوشی کو ماتم میں تبدیل کردیا۔ گھر میں ہرطرف کہرام برپا ہوگیا اور شادی کی ساری خوشیاں غم وواندوہ میں تبدیل ہو گئیں۔

مصری نکاح خواں کی موت حرکت قلب کے اچانک بند ہونے سے واقع ہوئی۔ اس ناگہانی موت کا اہل خانہ کو تک یقین نہیں تھا۔ مرسیٰ خلیل کو اسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اس کی موت کی تصدیق کردی۔

گاؤں کے لوگوں کا کہنا ہے کہ مرسیٰ خلیل سلامہ ایک نیک سیرت اور اعلیٰ اخلاق کے مالک تھے۔ وہ ناراض لوگوں میں صلح کراتے اور ایک دوسرے سے حسن اخلاق سے پیش آنے کی ہمیشہ تلقین کرتے رہے۔ انہیں اکثر یہ کرتے سنا جاتا تھا کہ ’اے اللہ ہمارا خاتمہ خوبصورت انداز میں فرما‘۔