.

کترینہ کیف کی کرنل قذافی کے ساتھ 15 سال پرانی تصویر وائرل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اردو کے مشہور شاعر اسد اللہ خاں غالب نے شاید ایسے موقع کے لئے ہی یہ کہا تھا کہ ’’چند تصویر بتاں، کچھ حسینوں کے خطوط ۔۔۔ بعد مرنے کے مرے گھر سے یہ سامان نکلا‘‘۔ یہ شعر بالی ووڈ کی باربی ڈول کترینہ کیف کی لیبیا کے مقتول مرد آہن کرنل معمر القذافی کے ہمراہ 15 سال پرانی ایک تصویر کی ان دنوں میڈیا گردش پر حرف بہ حرف صادق آتا ہے، جس میں وہ کرنل قذافی کے پہلو میں بیٹھی نظر آ رہی ہیں۔

یاد رہے کہ کترینہ کیف نے کیرئیر کی ابتدا نہایت کم عمری میں ماڈلنگ سے کی۔ بے پناہ خوبصورتی اور معصوم حسن کے باعث کترینہ کا شمار جلد ہی سپر ماڈلزمیں ہونے لگا۔ اپنی خوبصورتی کے باعث کترینہ جلد ہی پوری دنیا میں مشہور ہوگئیں اور دنیا بھر سے انہیں فیشن شوز میں مدعو کیا جانے لگا۔ ایسے ہی ایک فیشن شو میں شرکت کرنے کیلئے کترینہ کیف دیگرماڈلزکے ہمراہ لیبیا گئیں جہاں ان کی ڈکٹیٹر کرنل قزافی کے ساتھ 15 سال قبل لی گئی تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی۔

ماضی کی سپر ماڈل شمیتا سنگھا نے بقول بھارتی میڈیا اپنے انسٹا گرام اکاؤنٹ پر کترینہ کیف اور کرنل قذافی کی 15 سال قبل لی گئی ایک تصویر شیئر کی ہے جس میں کترینہ کرنل قذافی کے پہلو میں بیٹھی مسکرا رہی ہیں، جبکہ ان کے ساتھ دیگر ماڈلز کے ساتھ اداکارہ نیہا دھوپیا بھی نظر آرہی ہیں۔ شمیتا نے تصویر کے ساتھ پیغام درج کیا کہ 15 سال قبل جب ہم ایک فیشن شو میں شرکت کیلئے لیبیا گئے تھے اس وقت کرنل قذافی نے ہمیں ’’ملاقات کا شرف‘‘ بخشا تھا یہ ایک یادگار دورہ تھا جسے ہم کبھی نہیں بھلا سکیں گے۔ اس دورے میں کترینہ کیف بھی ہمارے ساتھ تھیں تاہم انہیں اس دورے کے بارے میں کچھ یاد ہے یا نہیں اس بارے میں وہ کچھ نہیں کہہ سکتیں۔

تصویر میں دیگر ماڈلز بھی موجود ہیں لیکن کترینہ کے معصوم حسن اور دلکش خد وخال کے باعث نظر صرف ان کے چہرے پر ہی ٹکتی ہے۔ شاید یہ ہی وجہ ہے کہ کرنل قذافی نے انہیں اپنے برابر میں بٹھایا ہے۔ فی الحال کترینہ کیف کی جانب سے کرنل قذافی کے ساتھ لی گئی اس تصویر سے متعلق کوئی بیان سامنے نہیں آیا ہے۔