شامی اپوزیشن رہنماوں نے سرکاری میڈیا کو بیان دینے کی تردید کر دی

بشار الاسد حکومت کے ترجمان ’’سوریانا ریڈیو‘‘ نے گزشتہ روز تین حکومت مخالف رہنماوں کے بیان نشر کئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

بشار الاسد کی مخالف سرکردہ اپوزیشن رہنما مرح البقاعی نے شام سے نشریات پیش کرنے والے ’’سوریانا ریڈیو‘‘ کو بیان دینے کی سختی سے تردید کی ہے۔

’’سوریانا ریڈیو‘‘ شامی حکومت کی جنرل اتھارٹی برائے ٹی وی اینڈ ریڈیو کے زیر انتظام نشریات پیش کرتاہے۔ بدھ کے روز ریڈیو سے بشار الاسد مخالف متعدد سینئر اپوزیشن رہنماوں بشمول جارج صبرا، مرح البقاعی اور جہاد المقدسی کے بیانات نشر ہوئے جسے پیش کرتے وقت ریڈیو نے دعوی کیا کہ اپوزیشن رہنماوں نے یہ بیانات ریڈیو کے نام خود جاری کئے ہیں۔

تاہم مرح البقاعی نے ایک بیان میں اس امر کی تردید کی ہے کہ انہوں نے سوریانا ریڈیو کو کوئی بیان جاری کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ سوریانا سے نشر اپوزیشن رہنماوں کے بیانات کو جھوٹا ثابت کرنے کے لئے یہی امر کافی ہے کہ ریڈیو نے اپنے اس مراسلہ نگار کا نام نہیں بتایا جس نے مبینہ بیان کے لئے ہم سے رابطہ کیا۔

مرح البقاعی نے مزید کہا نشر کردہ بیان پرانا ہے جسے انہوں نے ایک اور ریڈیو اسٹیشن کے لئے ریکارڈ کرایا۔ انہوں نے خیال ظاہر کیا کہ سوریانا ریڈیو اسٹشن نے اسی پرانے بیان کو ایڈیٹ کر کے دوبارہ چلایا ہو۔

درایں اثناجارج صبرا نے ’’آل 4سیریا‘‘ کو بتایا کہ ان کا شامی ریڈیو سوریانا سے کوئی رابطہ نہیں ہوا۔ مسٹر صبرا نے مزید بتایا کہ جنیوا میں جاری مذاکرت کی وجہ سے وہ کسی بھی صوتی یا مرئی میڈیا ہاوس سے گفتگو سے احتراز برت رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں