.

بھارت:4 ٹانگوں، 3 بازوؤں،2 اعضائے تناسل والے بچے کا قصہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بھارت میں حال ہی میں پیدا ہونے والے ایک عجیب الخلقت بچے نے دنیا بھر کی توجہ اپنی جانب مبذول کرالی۔ اس بچے کی چار ٹانگیں، تین بازو اور دو اعضائے تناسل ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مقامی اور عالمی میڈیا میں آنے والی اطلاعات میں بتایا گیا ہے کہ 22 سالہ کولی پائی نامی لڑکی نے شمالی بھارت کے شہر بندواڑہ میں ایک بچے کو جنم دیا۔ بچے کو دیکھ کر اس کے اقارب حیرت اور خوف کا شکار ہوگئے اور انہوں نے فوری طور پر اسے جان چھڑانے کے لیے اسے دریا میں پھینکنے کا فیصلہ کرلیا۔

ابھی وہ اس عجیب الخلقت بچے کو دریا برد نہیں کرپائے تھے کہ ایک ڈاکٹر بھارت پال ڈانڈا کو اس کا علم ہوا۔ انہوں نے بچے کو اپنے اسپتال منگوانے کے لیے ایمبولینس ارسال کی۔ 35 سالہ ڈاکٹر پال ڈانڈا نے بچے کے فالتو اعضا سرجری کی مدد سے ختم کردیے ہیں۔

ڈاکٹر ڈانڈا کاکہنا ہے کہ مجھے اس وقت سخت صدمہ پہنچا جب پتا چلا کہ ایک عجیب الخلقت بچے کو اس کے والدین دریا میں پھینکنا چاہتے ہیں۔ اس لیے میں نے انہیں اس جرم سے بچانے کے لیے فوری فیصلہ کیا اور بچے کو اسپتال منگوا لیا۔ اسپتال پہنچتے ہی بچے کا مکمل طبی معائنہ کیا گیا اور اس کی زندگی بچانے کے لیے اسے ضروری دوائی دینا شروع کردی۔ بچے کی حالت کافی خراب تھی۔

اس لیے اسے ایک دوسرے اسپتال منتقل کرنا پڑا۔ بچے کو جے پور کے سرکاری اسپتال منتقل کردیا گیا جہاں چار ماہر ڈاکٹروں نے مل کر بچے کی سرجری کی اور اس کے فالتو اعضا ختم کردیے۔ بچہ تیزی کے ساتھ روبہ صحت ہے۔