.

خبردار! ہر چمکتی چیز سونا اور ہر سیلفی حقیقی نہیں ہوتی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سیلفی بنانا شاید ہم میں سے بہت سوں کی زندگی کا لازمی جزو بن چکا ہے۔ خود نمائی کے شوقین حضرات کیمرے اور موبائل فون کے ذریعے سیلفی کا کوئی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیتے۔ مقصد صرف تفریح اور ان تصاویر کو سوشل میڈیا پر پوسٹ کرکے زیادہ سے زیادہ ’لائیکس‘ اور تبصرے حاصل کرنا ہوتا ہے۔

مگر بہت سی سیلفیاں جو آپ کو حیرت میں ڈال دیں ضروری نہیں کہ وہ حقیقی بھی ہوں۔ آپ کو حیران کر دینے والی تصاویر ’فوٹوشاپ‘ کا کمال بھی تو ہوسکتا ہے جیسا کہ ایک پائلٹ کی جعلی سیلفی سے ظاہر ہوتا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ایک نوجوان پائلٹ ’گانسو‘ نے اپنے انسٹا گرام پر حیران کر دینے والی سیلفیاں پوسٹ کیں مگر اس کی دھوپ کی عینک نےان کے جعلی ہونے کا بھانڈا پھوڑ دیا۔

گانسو کی پوسٹ کردہ تصاویر میں اسے فضا میں موجود جہاز کے کاک پٹ سے باہر نکلے دیکھا جاسکتا ہے۔ ایک منظر میں وہ دبئی کے نخلہ جمیرا پر ہے۔ دوسرے میں اسے سفید بادلوں میں جب کہ ایک جادوئی منظر میں وہ نیویارک شہر کے اوپر ہے۔ مگر توجہ سے دیکھنے کے بعد پتا چلتا ہے کہ وہ کسی ایئر پورٹ پر ہے کیونکہ اس کی دھوپ کی عینک سےمنعکس ہونے والی تصویر میں جہاز کے آگے رن وے دیکھا جا سکتا ہے۔

اخبار ’ڈیلی میل‘ کے مطابق گانسو کی پوسٹ کردہ تصاویر حقیقی نہیں۔ گانسو نے خود بھی اعتراف کیا ہے کہ انسٹا گرام پر پوسٹ کی گئی تصاویر فوٹو شاپ کی مدد سے تیار کی گئی ہیں۔ اس نے لکھا کہ ’ میں نے بتایا نہیں تھا کہ ہر تصویر کوحقیقی سیلفی نہیں مان لینا چاہیے‘۔