.

"سُپر مُون" نے دنیا بھر کے آسمان کو روشن کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اتوار اور پیر کی درمیانی شب سُپر مون نے دنیا کے متعدد حصوں میں تاریک آسمان کو منوّر کر دیا۔ اس موقع پر پیشہ ورانہ فوٹوگرافروں نے اس مبہوت کر دینے والے فلکیاتی مظہر کی بہترین تصاویر اتارنے کے لیے دوڑ لگا دی۔

لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے آسمان پر معمول سے بڑے حجم اور زیادہ روشن چاند کا مشاہدہ کیا۔

سُپر مُون کی اصطلاح اس وقت استعمال کی جاتی ہے جب چاند زمین کے گرد محور میں قریب ترین مقام پر ہوتا ہے۔ اس دوران وہ حجم میں 7% زیادہ بڑا نظر آتا ہے اور افق کے بلند ترین نقطے پر اس کی روشنی میں 15% اضافہ ہو جاتا ہے۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کی ویب سائٹ کے مطابق اتوار کی شب چاند زمین سے 222،761 ميل کے فاصل پر تھا۔ عام حالات میں چاند اور زمین کے درمیان اوسط فاصلہ 238،900 ميل ہوتا ہے۔

واضح رہے کہ چاند زمین کے گرد دائرے کی شکل میں نہیں گُھومتا۔ اس لیے مدار کے مطابق زمین سے چاند کی مسافت تبدیل ہوتی رہتی ہے۔