ابو ظبی میں اماراتی خاتون کا رحم نکالنے کے لیے پہلی مرتبہ روبو ٹک سرجری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات کے دارالحکومت ابو ظبی میں پہلی مرتبہ ایک اماراتی خاتون کا رحم ( بچہ دانی ) نکالنے کے لیے روبوٹک سرجری کی گئی ہے ۔اس خاتون کے رحم میں گلٹیاں بن چکی تھیں اور اس کے اندرون میں ورم ہوگیا تھا۔

اس خاتون کے پیچیدہ کیس کے پیش نظر اس کو ابو ظبی کے کلیو لینڈ کلینک میں آپریشن کے لیے بھیجا گیا تھا ۔اس کی بچہ دانی کو نکالنے کے لیے روبوٹک آلات استعمال کیے گئے ہیں ،اس لیے اس کو روایتی سرجری کے مقابلے میں کم تکلیف کا سامنا کرنا پڑا ہے اور وہ بہت تھوڑے وقت میں صحت یاب ہوگئی ہے۔

لیکن روبو ٹک کا ہرگز بھی یہ مطلب نہیں کہ سرجری کا تمام عمل روبوٹ کے ذریعے ہی کیا گیا ہے بلکہ سرجن نے چھوٹے سرجیکل آلات کی مدد سے یہ آپریشن کیا ہے اور وہ 3 ڈی کیمرے کی بدولت سرجری کی جگہ کو براہ راست دیکھ سکتا تھا۔اس لیے اس کو اس پیچیدہ آپریشن کے عمل میں کوئی مشکل درپیش نہیں ہوئی ہے۔

اس اماراتی مریضہ کے ڈاکٹر ژاں یائی کروح کا کہنا تھا کہ ’’ خواتین کے خطرناک کیسوں کی صورت میں ان کی روبوٹک سرجری کی مدد سے جراحی سے کم درد اور تکلیف ہوتی ہے ۔سرجری کے بعد ان کے زخم کے جلد ٹھیک ہونے اور صحت کی بحالی کا دورانیہ بھی کم ہو کر رہ گیا ہے اور وہ بہت جلد اپنی زندگی کے روز مرہ معمولات انجام دے سکتی ہیں‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں