طالبہ کو کُوڑے دان میں ڈالنے پر الجزائری معلمہ ملازمت سے فارغ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

افریقی ملک الجزائر میں ایک اسکول کی معلمہ نے اپنی ایک طالبہ کو سزا کے طور پر کوڑے دان میں ڈال دیا جس پر محکمہ تعلیم نے معلمہ کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے اسے ملازمت سے برطرف کر دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سوشل میڈیا پر سامنے آنے والی فوٹیج جس میں ایک بچی کو ردی کی ٹوکری میں کھڑے ہاتھ میں کتاب اٹھائے دیکھا جاسکتا ہے کے واقعے پر عوامی حلقوں میں سخت برہمی پائی جا رہی ہے۔

مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق یہ واقعہ الجزائر کے مشرقی علاقے عین طایہ میں واقع ’العربی بن مھیدی‘ نامی اسکول میں پیش آیا جب استانی نے اسکول کا کام نہ کرنے پر چوتھی جماعت کی ایک طالبہ کو سزا کے طور کوڑے دان میں کھڑا کر دیا تھا۔

دوسری جانب تنقید کا سامنا کرنے والی فرانسیسی زبان کی معلمہ کا کہنا ہے کہ اس نے یہ اقدام تادیب کے طور پر کیا ہے تاکہ بچے زیادہ محنت سے کام کریں اور بھرپور تیاری کے ساتھ امتحانات میں شامل کو اچھے نمبر حاصل کرسکیں۔

دوسری جانب الجزائری وزارت تعلیم نے ایک بیان میں کہا ہے کہ بچی کو کوڑے دان میں ڈالنے والی معلمہ کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے اسے ملازمت سے برطرف کردیا گیا ہے۔ معلمہ کا کہنا ہے کہ وہ بچوں کو سبق یاد نہ ہونے پر سزا کے طور پر کمرہ جماعت کے اندر اور باہر صفائی کی سزا دیتی رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں