مصری گول کیپر فٹبال کے عالمی کپ کی تاریخ کا معمّر ترین کھلاڑی بن گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

روس میں آج پیر کے روز فٹبال کے عالمی کپ کے گروپ A کے میچ میں مصری گول کیپر عصام الحضری سعودی عرب کے خلاف میچ کے لیے میدان میں داخل ہوئے تو انہوں نے عالمی کپ کی تاریخ میں معمر ترین فٹبالر ہونے کا اعزاز حاصل کر لیا۔

15 جنوری 1973ء کو پید اہونے والے الحضری کی عمر 45 سال اور 161 دن ہے۔

اس سے قبل فٹبال کے عالمی کپ کی تاریخ میں معمر ترین کھلاڑی کا اعزاز کولمبیا کے گول کیپر Faryd Mondragon کے پاس تھا۔ فیرڈ مونڈراگون نے 2014ء میں برازیل میں ہونے والے عالمی کپ میں جاپان کے خلاف میچ کھیلا تو اُن کی عمر 43 سال اور 3 دن تھی۔

مصری ریکارڈ ہولڈر گول کیپر عصام الحضری آج اپنے 25 سالہ کیرئر کا 159 واں بین الاقوامی میچ کھیل رہے ہیں۔ عالمی کپ میں یہ ان کی پہلی شرکت ہے کیوں کہ مصر کی ٹیم 28 برس کے بعد فٹبال کے عالمی کپ میں جگہ بنانے میں کامیاب ہوئی ہے۔ الحضری چار مرتبہ (1998, 2006 , 2008 اور 2010) مصر کی اُس ٹیم کا حصّہ رہے جس نے افریقہ کپ جیتنے کا اعزاز حاصل کیا۔ مصر نے مجموعی طور پر اب تک سات مرتبہ افریقہ کپ اپنے نام کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں