.

مسجد حرام کے کتب خانے میں لوازمات کی سینی ٹائزیشن پر خصوصی توجہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مسجد حرام اور مسجد نبویﷺ کے امور کی جنرل پریذیڈنسی کی جانب سے حرمین شریفین کو کرونا وائرس سے محفوظ رکھنے کے لیے بھرپور حفاظتی تدابیر اور احتیاطی اقدامات کا سلسلہ جاری ہے۔ اسی حوالے سے مسجد حرام کے کتب خانے کو بھی مستقل صورت میں سینی ٹائز کیا جا رہا ہے۔

مسجد حرام کے کتب خانے کے ڈائریکٹر ابراہیم بن محمد شیبہ کے مطابق کتب خانے کے لوازمات اور ساز وسامان کی سینی ٹائزیشن کا پورا خیال رکھا جا رہا ہے۔ ان میں کتابوں کے شیلف، مطالعہ کرنے والوں کی میزیں اور کرسیاں اور کتب خانے میں موجود کمپیوٹرز بھی شامل ہیں۔

ابراہیم شیبہ نے مزید بتایا کہ کتب خانے میں 65 نشستیں، برقی کتب خانے پر مشتمل 15 کمپیوٹرز اور محققین کے لیے مختص 10 کیبن ہیں۔

سلامتی کے اعلی ترین معیار کی یہ تمام تر حفاظتی تدابیر اور احتیاطی اقدامات مملکت کی دانش مند اور مخلص قیادت کی خصوصی ہدایات پر عمل میں آ رہے ہیں۔ اس سلسلے میں حرمین شریفین کے امور کے نگرانِ اعلی ڈاکٹر عبدالرحمن بن عبدالعزیز السدیس کی شب و روز محنت اور خصوصی توجہ کا اہم کردار ہے۔

یاد رہے کہ مسجد حرام کا کتب خانہ حرم مکی کے اندر بابِ شاہ فہد کے نزدیک دوسری منزل پر واقع ہے۔ یہ کتب خانہ 24 گھنٹے کام کرتا ہے۔