.

جی سیون سربراہ ظہرانہ :ملکہ ایلزبتھ نے تلوار سے کیک کاٹنے پرکیوں اصرارکیا؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برطانیہ کی ملکہ ایلزبتھ نے جمعہ کے روز جنوبی شہر کارنوال کے نواح میں دنیا کی سات بڑی معیشتوں پر مشتمل گروپ سیون کے سربراہ اجلاس کے موقع پر ایک تقریب میں کیک کاٹنے کے لیے بالاصرار روایتی تلوار کا استعمال کیا ہے لیکن انھوں نے ایسا کیوں کیا؟

ملکہ ایلزبتھ مُصر تھیں کہ وہ تلوار ہی سے بڑا کیک کاٹیں گی مگران کے اس اصرار پر ان کے ساتھ کھڑی ڈچز آف کارنوال کامیلا اورڈچزآف کیمبرج کیٹ میڈلٹن اپنی ہنسی ضبط نہیں کرسکی ہیں اور تقریب میں شریک باقی سب لوگ بھی کھلکھلا کر ہنس پڑے۔

ملکہ کو ایڈن پروجیکٹ میں بڑے ظہرانے کے افتتاح کے موقع پر ایک بڑا کیک کاٹنے کے لیے روایتی تلوار پیش کی گئی تھی۔جب وہ اس سے کیک کاٹنے لگیں تو ان کے پاس کھڑی ایک خاتون نے آواز لگائی کہ اس کام کے لیے تو چاقو بھی دستیاب ہے۔

اس پر ملکہ بولیں:’’ جی ہاں! میں جانتی ہوں کہ چاقو بھی موجود ہے۔‘‘پھر وہ شاہی روایت کو برقرار رکھتے ہوئے تلوار سے کیک کاٹا مگر وہ بہ مشکل ہی کیک کے دوٹکڑے کرپائی تھیں۔


ملکہ ایلزبتھ نے دنیا کے سب سے بڑے مصنوعی برساتی جنگل کے سائبان کے نیچے سات امیر ترین ممالک پر مشتمل گروپ کے قائدین کے اعزاز میں استقبالیہ دیا۔اس موقع پر انھوں نے امریکی صدر جوبائیڈن اور ان کی اہلیہ جِل بائیڈن سے بھی ملاقات کی اور ان سے دوطرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا۔

اس استقبالیہ تقریب میں پچانوے سالہ ملکہ کے ساتھ برطانوی شاہی خاندان کی دوسری اہم شخصیات بھی موجود تھیں۔ان میں ملکہ کے بڑے فرزند اور وارث شہزادہ چارلس ،ان کی اہلیہ کامیلا اور پوتے شہزادہ ولیم اور ان کی اہلیہ کیٹ میڈلٹن شامل تھیں۔

ملکہ ایلزبتھ گذشتہ سات دہائیوں سے زیادہ عرصے سے برطانیہ عظمیٰ کی شاہی حکمراں چلی آرہی ہیں۔ان کے شوہر شہزادہ فلپ اپریل میں وفات پا گئے تھے۔اس کے بعد انھوں نے پہلی مرتبہ کسی بڑی عوامی تقریب میں شرکت کی ہے۔