.

مامتا کی آنکھوں میں خون اتر آیا، رونے والی بیٹی پانی کے ڈرم میں ڈبو دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں ایک سنگ دل ماں نے اپنی ہی کوکھ سے جنم لینے والی بچی کو مسلسل رونے چلانے کی وجہ سے پانی سے بھرے ڈرم میں ڈبو کر ننھی جان کی زندگی کا چراغ گل کر ڈالا۔ یہ المناک واقعہ مصر کی الفیوم گورنری میں پیش آیا۔

تفصیلات کے مطابق الفیوم گورنری کے طامیہ پولیس سینٹر کو ایک اطلاع ملی کہ سرسنا گاؤں میں ایک خاتون نے اپنی نو سالہ بچی کو پانی کے ڈرم میں پھینک کر قتل کر دیا۔

پولیس نے موقعے پر پہنچ کر تمام شواہد کا تفصیلی معائنہ کیا۔ مقتول بچی پانی کے ڈرم میں تھی جب کہ اس کی ماں بھی گھر پر موجود تھی۔ پولیس نے بچی کی لاش ڈرم سے نکالی۔ زیادہ دیر پانی میں رہنے کی وجہ سے لاش کا رنگ نیلا پڑ چکا تھا نعش کے جسم میں پانی بھر چکا تھا۔

پولیس کی تحقیقات سے معلوم ہوا کہ خاتون کی تین بچیاں ہیں اور وہ خود نفسیاتی عوارض کا شکار ہے۔ وہ پہلے بھی بچیوں پر تشدد کی مرتکب ہو چکی ہے۔ اس نے ایک بچی کے رونے چلانے پر اسے جان چھڑانے کے لیے جان سے ہی مار ڈالا۔ پولیس نے سفاک ماں کو گرفتار کرکے اس کے خلاف کارروائی شروع کردی ہے۔