.

گرمیوں کی چمک میں ’کوہ سودا‘ نے اوڑھی سفید چادر: تصاویر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایک طرف سعودی عرب کے مختلف علاقوں میں درجہ حرارت زیادہ ہونے کی وجہ سے لوگ پر فضا مقامات کا رُخ کر رہے ہیں۔ دوسری طرف سعودی عرب کے جنوبی علاقے عسیر میں واقع کوہ سودا پر ہونے والی بارش اور ژالہ باری نے نہ صرف موسم ٹھنڈا کر دیا بلکہ سودا پہاڑ پر پڑنے والی ژالہ باری سے علاقے نے سفیدی کی چادر اوڑھ لی۔ بلا شبہ گرمی کے ستائے لوگوں کے لیے یہ موسم ناقابل یقین اور حیران کن ہے۔

فوٹوگرافر "رشود الحارثی" نے گذشتہ روز کوہ سودا میں ہونے والی ژالہ باری کے بعد سفیدی مائل مناظر کی عسکری بندی کی۔ اس نے نہ صرف سودا پہاڑ کے مناظر اپنے کیمرے میں محفوظ کر کے سوشل میڈیا پر شیئر کیے بلکہ عسیر کے ابھا شہر کے مناظر بھی دکھائے۔ عسیر کے علاقے کے دلبہار موسم کے مناظر کوسوشل میڈیا پر لوگوں نے غیرمعمولی طور پر پسند کیا۔

/
/

الحارثی نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کو بتایا عسیر میں خوبصورتی کی تصاویر ہمیشہ مکمل ہی اس وقت ہوتی ہیں جب وہاں کا درجہ حرارت کم ہوتا ہے۔ موسم ٹھنڈا ہونے سے وہاں پرخوبصورت ماحول بن جاتا ہے۔ خاص طورپر جب بارش ہواور پہاڑوں کی چوٹیوں پر دھند کی لہریں چھا جائیں تو وہی منظر ناقابل بیان اور سیاحوں کے لیے انتہائی پرکشش ہوتا ہے۔

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ عسیر میں سودا پہاڑ کا موسم باقی سعودی عرب سے مختلف اور الگ ہے۔ اس کی سطح سمندر سے اونچائی 3000 میٹر سے زیادہ ہے اور یہ پہاڑ گھنے درختوں سے ڈھکا ہوا ہے۔ یہ جنگلات اس علاقے کے موسم، آب وہوا اور قدرتی ماحول کو مزید پرکشش بنا دیتے ہیں۔

الحارثی کا کہنا تھا کہ السودا کا درجہ حرارت موسم گرما میں 15 ڈگری سینٹی گریڈ سے زیادہ نہیں ہوتا جبکہ سردیوں میں درجہ حرارت آس پاس کے پہاڑی علاقوں کے مقابلے میں بہت کم ہوتا ہے۔