متحدہ عرب امارات میں ڈرون کی تمام نجی سرگرمیوں اورکھیلوں کےہلکےطیارے اڑانےپرپابندی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

متحدہ عرب امارات نے ہفتہ 22 جنوری سے کھیلوں کے ہلکے طیاروں سمیت ڈرونز کے مالکان، پریکٹیشنرز اور شوقین افراد کے تمام فلائنگ آپریشن پرپابندی عاید کردی ہے۔

یواے ای کی وزارت داخلہ نے اپنے ٹویٹراکاؤنٹ پر پوسٹ کیے گئے ایک بیان میں کہا ہے کہ’’یہ فیصلہ جنرل اتھارٹی برائے سول ایوی ایشن کے ساتھ ہم آہنگی اورمتعلقہ رہ نما خطوط کے مطابق کیا گیا ہے۔اس پابندی کا فضائی اورپیراکی کے کھیلوں پر بھی اطلاق ہوگا‘‘۔

وزارتِ داخلہ نے کہا کہ یہ فیصلہ حال ہی میں اجازت ناموں کے غلط استعمال کے پیش نظرکیا گیا ہے۔کھیلوں کے عمل کوان علاقوں تک محدود نہیں کیا گیا ہے،جن کی شناخت صارف کے اجازت ناموں میں کی گئی تھی اور وہ ان علاقوں میں غیرقانونی طور پر داخل ہوئے ہیں جہاں اس قسم کی سرگرمیاں ممنوع ہیں‘‘۔

بیان میں واضح کیا گیا ہے کہ ’’جن اداروں کے پاس کام کے معاہدے یا تجارتی یا اشتہاری منصوبے ہیں اورجو ڈرون کے استعمال کے ذریعے فلم بندی پرانحصارکرتے ہیں، انھیں اپنے کام انجام دینے کے لیے ضروری استثنا اور اجازت ناموں کے حصول کی غرض سے مجازحکام سے بات چیت کرنی چاہیے‘‘۔

وزارت نے خبردار کیا ہے کہ رہ نما خطوط وہدایات کو نظراندازکرنے والوں کو قانونی چارہ جوئی کا سامنا ہوسکتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں